تازہ ترینکالممرزا عارف رشید

اس ملک نے ہمیں کیا نہیں دیا

اس ملک کو جن اہم چیزوں کی ضرورت ہے ہم ان کی طرف توجہ کیوں نہیں دیتے۔اگر آج ہمارے حصہ میںکچھ پانی آبھی جاتا ہے تو ہم اسے بھی سمندر کی نذر کردیتے ہیں۔آج تک ہم اپنا پانی سٹور کیوں نہیں کرسکے یہ ہماری حکومت کی نا اہلی نہیں تو کیا ہے؟ ویسے تو خاص رحمت ہے کہ یہ ملک چل رہا ہے مگر جو ہم اس ملک کے ساتھ کررہے ہیں وہ بھی کم نہیں اس ملک پاکستان نے جو ہمیں عزت دی وہ ہمارے لئے کم نہیں ہم نے اس 65سال کے پاکستان کو کیا دیا؟دہشت گردی،لسانیت،انتہا پسندی،تعصب لیکن اس ملک نے ہر موڑ پر ہمیں اپنا نام دیا اور ہمیں عزت دی اور آج ہم فخر سے کہتے ہیں ہم پاکستانی ہیں۔ہمارے ملک سے اگر دو لعنتوں کا خاتمہ ہو جائے تو ہم بدنامی سے بچ سکتے ہیں۔رشوت اور کمیشن مافیا،یہ دونوں چیزیں ملک کو دیمک کی طرح چاٹ رہی ہیں۔ان دو چیزوں کی وجہ سے ہم دنیا کی کرپٹ ترین لسٹ کے اوپر اوپر نمبروں میں شمار ہوتے جارہے ہیں مگر یہ ملک پھر بھی ہمیں عزت دے رہا ہے۔ہمارے ملک میں کس چیز کی کمی ہے۔قدرت نے ہمیں چار موسم کا جو تحفہ عطا کیا ہے وہ کسی نعمت سے کم نہیں۔﴿موسم خزاں،موسم بہار،موسم سرما،موسم گرما﴾ پنجاب میں سونا اگلتی زمینیں جن میں کپاس ،گنا،چاول،مونجی،مکئی جیسی فصلیں ہمارے لیے نعمت ہیں۔صوبہ بلوچستان جو کہ معدنیات کے لحاظ سے بہت اہم ہے جو ہمارے ملک کو سوئی ناردرن گیس جیسی نعمت دیتا ہے۔بلوچستان میںقدرت کی طرف سے ہمیں عطا کی گئی کئی بے شمار نعمتیں ہیں جن کا ہم ذکر کرتے کرتے تھک جائیں گے مگر وہ معدنیات ختم نہیں ہونگی ۔ہمیں تو حیرانی ہوتی ہے کہ ہمارے حکمران اس طرف توجہ کیوں نہیں دیتے۔یا تو ہمارے حکمران بکوائو ہیں یاپھر ان میں اتنی اہلیت ہی نہیں کہ یہ ملک پاکستان کیلئے کچھ کرسکیں۔صوبہ سندھ اس میں قدرت نے جو ہمیں سمندر عطا کیا ہے۔ہم اس سمندر سے کافی فائدہ اٹھا سکتا ہے لیکن ہمارے حکمران اس سے کوئی فائدہ بھی نہیں اٹھا رہے۔صوبہ خیبرپختونخواہ یہاں سے ہمیں قدرت میوہ جات،سڑکوں کیلئے پتھر،اور دیگرمصنوعات مہیا ہوتی ہیں۔ ہرچیز تو ہمارے پاس ہے مگر ہم اس کی بنیادوں کو کیوں کھوکھلا کررہے ہیں؟ ہم کب تک سوئے رہیں گے ہماری کب جاگ ہوگی۔اگر اب دنیا میںجنگ عظیم ہوئی تو وہ کسی اور چیز پر نہیں پانی پرہی ہوگی اب ہونے والی جنگیں پانی پر ہی کی جائیں گی نہ تو پٹرول کیلئے اور نہ ہی ایٹم بم بنانے کیلئے کی جائیں گی بلکہ پانی حاصل کرنے کیلئے یہ جنگیں دنیا میں انسانی جانیں لیں گے مگر ہم ہیں کہ آج تک سوئے ہوئے ہیں۔ آنے والے وقتوں میں یہ پانی ہمارے لئے اور بھی اہم ہو جائے گا جب ہم پانی کی بوند بوند کو ترسیںگے ہمارے ملک میں خانہ جنگی کی وجہ سے ہم کیوں بھول رہے ہیں یہ مسئلے بھی ہمارے لیے اہم ہیں ۔ہمارے ملک میں دریائوں میں پانی نہ ہونے کی وجہ سے دریا صحرا کا منظر پیش کررہے ہیں۔ایک ہم ہیں کہ آپس کی لڑائی کی وجہ سے دشمن کو فائدہ پہنچا رہے ہیں ۔جس کی وجہ سے دشمن اپنے مذموم عزائم میں کامیاب ہورہا ہے۔ہمارے ملک میں پانی کی کمی کی وجہ سے سیم اتنانیچے چلے گئے ہیں کہ کئی کئی فٹ تک پینے کا پانی نہیں ملتا۔دوسرا ہمارا پانی آلودہ ہوگیا ہے کہ پانی کو دیکھ کر پینے کا دل ہی نہیں کرتا۔مگر ہم ہیں کہ اب تک ان چیزوں کی طرف توجہ ہیں دے رہے اور نہ ہی ڈیم بنا رہے ہیں۔دنیا آگے کی طرف جارہی ہے ہم ابھی تک خواب غفلت میں سوئے ہوئے ہیں۔پاکستان میں ہم کوئی بھی کام شروع کرنے لگتے ہیں تو پہلے تو ہمیں اس کام کیلئے کمیشن دینا پڑتا ہے اگر کمیشن نہ ہوتو بہت بڑی شفارش کی ضرورت ہوتی ہے۔رشوت اور کمیشن جیسی لعنتوں نے ملک پاکستان کو ہمیشہ ہی نقصان پہنچایا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  شہید کی جو موت ہے وہ قوم کی حیات ہے: آرمی چیف

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker