تازہ ترینعلاقائی

جھنگ:حج عمرہ کروانے کے نام پر لوگوں سے ایک کروڑ80لاکھ روپے ہڑپ کرگیا

jhangجھنگ(بیورو رپورٹ) حج عمرہ کروانے کے نام پر لوگوں سے رقم بٹورنے والا گروہ اس سال بھی جھنگ میں 100کے قریب مردو خواتین کو ویزہ نہ ملنے کا کہہ کر ان سے ایڈوانس لی گئی ایک کروڑ80لاکھ روپے سے زائد رقم ہڑپ کرگیااوراسکے جھانسہ میں پھنسنے والے دربدر دھکے کھا رہے ہیں اورتاحال اس لٹیرے گروہ کا کوئی سراغ نہ مل سکا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ملک محمد فیاض جھنگ سٹی روڈ باالمقابل انعام پٹرول پمپ جھنگ شہر نے کارواں صدائے مدینہ کے نام پر بغیرلائسنس ایک حج عمرہ ٹریول ایجنسی بنا رکھی ہے جو لوگوں کوشعبان تک 80ہزار روپے اوررمضان شریف میں عمرہ کیلئے ڈیڑھ لاکھ روپے فی کس حج عمرہ کروانے کیلئے سو کے قریب مرد و خواتین سے ایک کروڑ80لاکھ روپے کے قریب ایڈوانس رقوم اکٹھی کرکے فرار ہو گیا ہے۔معلوم ہوا ہے کہ محکمہ ایجوکیشن کے کلرک ظہور احمد کی معرفت سے 40،ملک محمد جمیل کی معرفت14،محمد شبیر 6،علی شیر5،شیر محمد اور محمد منیر وغیرہ کی معرفت لوگوں نے حج عمرہ کیلئے مذکورہ ٹریول ایجنسی کو عرصہ 5ماہ قبل 25ہزار سے ڈیڑھ لاکھ روپے تک کی رقوم ایڈوانس جمع کر وا رکھی تھیں اور 10جون2013ء سے ملک محمد فیاض لوگوں سے یہی وعدہ کرتا رہا کہ بس آجکل یا دو چاردنوں میں ویزے آجائیں گے جنہوں نے پیسے جمع کر وارکھے ہیں وہ اپنی مکمل تیاری کرلیں آخر کار 24جون کی شام کو اس نے بتایا کہ ویزہ نہیں لگ سکے لہٰذا ان کے دونوں گروپوں کا کوئی بھی شخص عمرہ پر نہیں جا رہا ہے جس پر لوگوں نے غم وغصے کا اظہار کرتے ہوئے رقوم واپس کرنے کا مطالبہ کیا تو ملک محمد فیاض نے وعدہ کیا کہ ایک ہفتہ کے اندر اندر تمام متاثرہ افراد کو رقوم واپس کر دی جائینگی پریشان ہونے کی کوئی ضرورت نہیں لیکن آج تک نہ تو اس شخص نے کسی کو عمرہ کیلئے بجھوایاہے اور نہ ہی رقوم واپس کی ہیں اور پانچ چھ روز سے مکمل طور پر غائب ہے۔متاثرہ افراد نے وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف ،آئی جی پنجاب پولیس،آر پی او فیصل آباد اور ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر جھنگ سے پرزور مطالبہ کیا ہے کہ مذکورہ شخص کے خلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے ان کی رقوم واپس دلوائی جائیں اور اس کی نام نہاد ٹریول ایجنسی کو ہمیشہ کیلئے بند کیا جائے تاکہ اس کے جھانسہ میں آکر مزید لوگ لٹنے سے بچ سکیں۔

یہ بھی پڑھیں  تاجکستان پاکستان سے 30 ہزار ٹن چینی درآمد کرنے پر رضامند

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker