پاکستانتازہ ترین

حکومت کی کائنات اورشازیہ کو منتقل کرنےکی پیشکش

اسلام آباد(مانیٹرنگ سیل) پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا کے علاقے سوات میں طالبان کے حملے میں زخمی ہونے والی دو طالبات کائنات اور شازیہ کو صوبائی حکومت نے منتقل کرنے کی پیشکش کی ہے۔واضح رہے کہ اکتوبر میں طالبان نے ملالہ یوسفزئی پر فائرنگ کی تھی جس میں ملالہ سمیت کائنات اور شازیہ زخمی ہو گئی تھیں۔ کائنات کے والد ریاض احمد نے بتایا کہ صوبائی حکومت نے رابطہ کر کے پیشکش کی ہے کہ سکیورٹی وجوہات کے باعث ان کو کسی اور شہر منتقل کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا ’صوبائی حکومت نے ہمیں پیشکش کی ہے کہ آیا پشاور منتقل کردیا جائے یا پھر اسلام آباد۔ اس سلسلے میں ہم نے ابھی فیصلہ نہیں کیا ہے۔‘ ریاض احمد نے مزید بتایا کہ سوات سے اہلِ خانہ سمیت منتقل کرنے کی پیشکش دو دن قبل ہوئے دھماکے کے بعد دی گئی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ دو دن قبل ان کے گھر کے قریب ایک دھماکا ہوا تھا جس کے بعد اہلِ محلہ نے ان سے درخواست کی کہ وہ محلہ چھوڑ دیں۔ ریاض احمد نے کہا کہ محلے والوں کو خدشہ تھا کہ یہ دھماکا چھوٹا تھا اور کہیں اس سے بڑا دھماکا نہ ہو جائے۔ ملالہ یوسف زئی پر نو اکتوبر کو قاتلانہ حملہ ہوا تھا تاہم وہ شدید زخمی ہونے کے باوجود اس حملے میں زندہ بچ گئیں۔ طالبان نے حملے کی وجہ ملالہ یوسف زئی کا کھلے عام طالبان کے خلاف بیانات دینا بتایا تھا۔ ملالہ یوسفزئی کو برطانیہ علاج کے لیے منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ صحتیاب ہو رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  پاکستان اور سیسکس کے مابین 3 روزہ میچ بے نتیجہ ختم

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker