تازہ ترینعلاقائی

کمالیہ:سنی علماء کونسل کی اپیل پر احتجاجی ریلی میں سیکڑوں افراد کی شرکت

kamaliaکمالیہ (نامہ نگار) سنی علماء کونسل کی اپیل پر کمالیہ میں سانحہ راولپنڈی کے خلاف احتجاجی ریلی میں سیکڑوں افراد کی شرکت ، ریلی کے شرکاء نے کتبے اور بینرز اُٹھا رکھے تھے جن پر مذمتی نعرے درج تھے۔ تاجر تنظمیوں نے جلوس کے راستے میں آنے والی مارکیٹوں اور بازار کو بند کر دیا تھا۔ پولیس نے جلوس کے داخلی و خارجی راستوں سمیت لنک روڈز کو خاردار تاریں اور بیریر لگا کر صبح سے ہی بند کر دیا تھا۔ تفصیل کے مطابق سنی علماء کونسل کمالیہ کی جانب سے مدرسہ جامعہ فاروقیہ کمالیہ سے ایک حتجاجی ریلی زیر قیادت مولانا قاری عمر فاروق صدیقی ، قاری حبیب اللہ انور، حفیظ الرحمن رشیدی ، مولانا عبید الرحمن ضیاء ، مولانا حسن معاویہ، رائے نجیب اللہ خاں نکالی گئی۔ ریلی دہلی چوک، ریلوے روڈ سے ہوتی ہوئی مرکزی عید گاہ خیرا شہید میں پہنچ کر احتجاجی جلسہ کی شکل اختیار کر گئی ۔ ریلی کے شرکاء سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ حکومت اپنے وعدوں کو عملی جامہ پہناتے ہوئے راولپنڈی سانحہ کے ذمہ داران کو بے نقاب کرے اور ان کے خلاف مقدمات کا اندراج کر کے انہیں فوری گرفتار کیا جائے۔ ہم نے ہمیشہ ملک میں امن و امان کے قیام کیلئے حکومت کے ساتھ تعاون کیا ہے اور تخریبی کاروائیوں کی مذمت کی ہے۔ حکمرانوں کو چاہیے کہ ہماری امن پالیسی کو سراہتے ہوئے ،شہدا کے قاتلوں کو جلد از جلد گرفتار کر کے قانون کے کٹہرے کے ذریعے انہیں سر عام پھانسیاں دی جائیں۔ دریں اثناء تمام تاجر تنظیموں نے جلوس کے راستوں میں آنے والی تمام مارکیٹوں اور دوکانوں کو بند کر دیا تھا۔ پولیس نے سخت ترین سیکورٹی کے انتظامات کر رکھے اور تمام داخلی و خارجی راستوں کے ساتھ ساتھ تمام لنک روڈز کو بھی خاردار تاریں لگا کر اور بیریر لگا کر بند کر رکھا تھا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button