تازہ ترینعلاقائی

کراچی:لاپتہ شہری کے اہل خانہ کو ہراساں کرنے پر، حساس اداروں،وزارت داخلہ اور آئی جی کو نوٹس جاری

کراچی﴿نامہ نگار﴾سندھ ہائی کورٹ نے لاپتہ شہری کے اہل خانہ کو ہراساں کرنے کے خلاف دائر درخواست پرحساس اداروں،وزارت داخلہ،آئی جی سندھ، ڈی آئی جی حیدرآباد اور سی آئی ڈی پولیس سمیت دیگر کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا ہے۔سندھ ہائی کورٹ میں جسٹس محمد تسنیم کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے محمد فضل،مسمات زلیخا اور مسمات فاطمہ کی جانب سے دائر درخواست کی سماعت کی۔ سید عبدالوحیدایڈوکیٹ کے توسط سے دائر درخواست میں کہا گیا ہے کہ درخواست گزار محمد فضل کا بھائی محمد رمضان 11فروری2011سے لاپتہ ہے،اس حوالے سے فاضل عدالت میں ایک آئینی درخواست بھی زیرسماعت ہے۔محمد فضل جو کہ دادو کا رہائشی ہے ،نے سیلاب کی تباہ کاریوں کے باعث اپنے اہل خانہ کو کراچی منتقل کردیا تھا،اپنے اہل خانہ سے ملاقات کے بعد3مارچ 2012کو وطن کارڈ سے رقم نکلوانے کیلئے روانہ ہوا تو کوٹری کے مقام سے سادہ لباس والے اہلکاروں اسے حراست میں لے لیا اور مختلف سوالات پوچھے ، یہ بھی پوچھا کہ تم لوگوں نے لاپتہ افراد کی بازیابی کیلئے قائم کمیشن کے روبرو کیا بیان دیا ہے؟،ہراساں کرنے کے بعد اسے رہا کردیا گیا مگر قانون نافذ کرنے والے ادارے اسے اور اہل خانہ کو مسلسل ہراساں کررہے ہیں۔ ہراساں کرنے سے روکا جائے اور تحفظ فراہم کیا جائے۔عدالت نے مدعا علیہان کو نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت جولائی کے تیسرے ہفتے ملتوی کردی ہے۔#

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker