تازہ ترینعلاقائی

کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کو فرقہ واریت قرار دیا جارہا ہے۔شکیل قادری

کراچی ﴿پریس ریلیز﴾ پاکستان سنی تحریک کے مرکزی رہنمائ محمد شکیل قادری نے کہا ہے کہ فرقہ وارانہ فسادات کرانے کی کوشش کی جارہی ہے اگر کراچی میں فرقہ واریت پھیل گئی تو ملک میں خانہ جنگی شروع ہوجائے گی۔پاکستان سُنی تحریک تحفظ ناموس رسالت لبیک یارسول اللہ پرامن لانگ مارچ پر دہشتگردوں کی فائرنگ اور کیمپ کو آگ لگائے جانے کی شدید مذمت کرتی ہے پاکستان سُنی تحریک کے تحت اس شرپسندی ودہشتگردی کے خلاف کل کراچی پریس کلب پر احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے راولپنڈی سے کراچی آمد پر لبیک یارسول اللہ لانگ مارچ کے استقبال کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔شکیل قادری نے کہا کہ سیاسی پیر اپنے موکلوں کے ذریعے فرقہ وارانہ فسادات پھیلا کر شہر کو آگ وخون میں نہلانے چاہتے ہیں اُنہوں نے کہا کہ تحفظ ناموس رسالت لانگ مارچ ریلی پر فائرنگ کرنے والے مسلمان نہیں ہوسکتے بلکہ یہ یہود و نصاریٰ کے ایجنٹ ہیں جو کراچی کے امن کو تہہ و بالا کرکے ملک کو فرقہ وارانہ فسادات میں دھکیلنے کے درپے ہیں۔عوام اب ان چہروں کو پہچان لیں جو کراچی پر مسلط ہونے کیلئے اوچھے ہتھکنڈے استعمال کررہے ہیں انہیں اسلام اور پاکستان سے کوئی سروکار نہیں ہے ان کا ایجنڈا صرف یہود ونصاریٰ کو تقویت پہچانا ہے۔یہ ہی وجہ ہے کہ کراچی میں جاری ٹارگٹ کلنگ کو فرقہ واریت قرار دیا جارہا ہے جو کہ کسی طور بھی کراچی سمیت ملک کے امن کیلئے نہایت ہی خطرناک ہے۔ #

یہ بھی پڑھیں  علی ظفر کی نئی فلم ”ٹوٹل سیاپا“ کا ٹائٹل سانگ جاری

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker