تازہ ترینعلاقائی

کراچی:پولیو ٹیموں پرحملوں قتل کےخلاف ڈاکٹرز اور لیڈی ہیلتھ ورکرزکےمظاہرے

doctorsکراچی (نامہ نگار) کراچی، پشاور، نوشہرہ اور چارسدہ میں پولیو ٹیموں پر حملوں اور لیڈی ہیلتھ ورکر زکے قتل کے خلاف کراچی سمیت سندھ کے مختلف شہروں میں ڈاکٹرز، پیرا میڈیکل اسٹاف اور لیڈی ہیلتھ ورکرز نے مظاہرے کئے اور انسداد پولیومہم کا بائیکاٹ کیا،جبکہ سڑکوں پر دھرنے بھی دیئے۔کراچی کے علاقے سرجانی ٹاؤن میں پولیو مہم کی خواتین رضا کاروں نے احتجاج کیا اور سڑک پر دھرنا جس کی وجہ سے ٹریفک جام ہو گیا تھا ،خواتین رضا کاروں نے سڑک پر ٹائر اور فرنیچر نذر آتش کیا ،اس موقع پر پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری موجود تھی ۔مظاہرے میں لیڈی ہیلتھ ورکرز پر حملوں کی مذمت کی گئی اور انہیں تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔مظاہرین ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈز اٹھائے دہشت گرد واقعات کے خلاف نعرے لگارہے تھے۔لیڈی ہیلتھ ورکرز کا کہنا تھا کہ ملک بھر میں خواتین رضاکار پولیو مہم سمیت صحت کی دیگر قومی مہم میں فرائض انجام دے رہی ہیں لیکن تسلسل سے حملوں اور ٹارگٹ کلنگ میں کام ممکن نہیں رہا۔حکومت تحفظ فراہم کرے اور قاتل گرفتارکئے جائیں۔علاوہ ازیں لاڑکانہ کے جناح باغ میں پیرامیڈیکل اسٹاف نے مظاہرہ کیا اور انسداد پولیو مہم کی مخصوص کٹس اور ٹوپیاں جلادیں۔ ڈوگری، گھوٹکی، نوشہروفیروز، جیکب آباد اور شکار پور میں بھی ڈاکٹرز، پیرا میڈیکل اسٹاف اور لیڈی ہیلتھ ورکرز نے احتجاجی مظاہرے کئے۔حیدرآباد پریس کلب پر لیڈی ہیلتھ ورکرز اور ویکسی نیٹرز نے دھرنا دیا۔ مظاہرین ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈز اٹھائے دہشت گرد واقعات کے خلاف نعرے لگارہے تھے۔ سکھر میں ویکسی نیشن ویلفیئرایسو سی ایشن کے احتجاج میں شہیدوں کے ورثا اور زخمی ورکرز سے اظہار یکجہتی کیا گیا۔ سانگھڑ میں بھی احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں۔

یہ بھی پڑھیں  ٹیکسلا: بیوی کو قتل کرنے والا اشتہاری ملزم دوسری بیوی سمیت گرفتار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker