تازہ ترینعلاقائی

خان پور:وزیراعلیٰ پنجاب کےحکم کےباوجود خان پورکی کچی آبادیوں کومالکانہ حقوق نہ مل سکے

khanpurخان پور (نامہ نگار) وزیر اعلیٰ پنجاب کے حکم کے باوجود خان پو رکی کچی آبادیوں کو مالکانہ حقوق نہ مل سکے معلو م ہوا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب کے طرف سے خان پور کی تمام مجوزہ کچی آبادی کے رہائشیوں کومالکانہ حقوق دینے کے لئے اعلان کے بعد ا س کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے مگر تحصیل کونسل ایڈمنسٹریشن خان پور کے افسراور چند ایسے اہلکار جن کے ان کچی آبادیوں کے علاقوں میں اپنے ذاتی مفادات وابستہ ہیں انہوں نے جان بوجھ کر اس جاری ہونے والے نوٹیفکیشن کو دبا رکھا ہے اور ابھی تک وزیراعلیٰ کے اس حکم پر عملدرآمد نہیں کیا جارہا قبل ازیں بھی پچھلے ادوار میں منظور ہونے والی کچی آبادیوں کی آڑ لے کر کی گئی قیمتی کمرشل پلاٹوں کو غریبوں کے نام الاٹ کرانے کے بعد اس وقت کے برسراقتدار مافیا نے بعدازاں اپنے نام ملکیت تبدیل کرانے کے بعد وہاں پر بنکوں کی بلڈنگز اور پلازے تعمیر کرارکھے ہیں خان پور شہرکو جو آج کل سیوریج کے مسائل کا سامنا ہے اسکی ایک وجہ یہ بھی بتائی جاتی ہے کہ خان پور کے ماڈل ٹاون میں قائم سیوریج ڈسپوزل کو اندر کھاتے کئے گئے جعل اور بوگس نیلام عام کے ذریعہ بااثر شخصیات کے نام منتقل کردیا گیا تھا اور اس شہر ی ڈسپوزل ختم ہونے سے سیوریج کے مسائل پیدا ہوئے آج کل وہاں کمرشل بنک اور پلازے تعمیر ہوچکے ہیں کچی آبادی کے علاوہ خان پو رکی چونگیات والی جگہوں کو بظاہر کرائے پر دیا گیا ہے اسی طرح خان پو رمیں تحصیل کونسل کے درجنوں پلاٹ سالہاسال سے سفید ٹکڑوں کی صورت میں ظاہر کرکے ان پر بھی تعمیرات ہوچکی ہیں اور کئی ایک جعل سازی سے رجسٹریاں بھی ہوگئی ہیں شہری عوامی حلقوں نے کہاہے کہ خان پور تحصیل کونسل کی ملکیت قیمتی جائیدادوں پر اپنے خونی پنجے گاڑ رکھے ہیں ان کے خلاف تحقیقات اور قیمتی اراضی کی واپسی ضروری ہے دریں اثناء کچی آبادی کے مکین ہزاروں غریب لوگوں نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ اس نوٹیفکیشن کی آڑ میں عملدرآمد پر تاخیر کی صورت میں کہیں مافیا ان علاقوں کے قیمتی پلاٹ آپس میں بندر بانٹ نہ کرلیں اس لئے ان کچی آبادی کے مکینوں کو مالکانہ حقوق دیئے جائیں ۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button