علاقائی

تیل ,بجلی، کھاد کی قیمتیں بڑھانے پر ضلع لیہ اور بھکر کے کسان سراپا احتجاج

لاہور﴿پریس ریلیز﴾ ضلع بھکر اور ضلع لیہ کے کسانوں کے کئی وفود نے کسان بورڈ پاکستان کے صدر سردار ظفر حسین خاں اور جنرل سیکرٹری ملک محمد رمضان روہاڑی سے ملاقاتیں کر کے کھاد کی قیمت میں مرکزی حکومت کے سب سڈی ختم کر کے تین سو روپے فی بوری اضافہ کر نے کی خبروں پر گہری تشویش کا اظہار کیا اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ یہ اضافہ فوری طور پر واپس لیا جائے ۔کسانوںنے بجلی، اور ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ اور مزید اضافہ کر نے کی خبروں پر بھی اپنا رد عمل ظاہر کر کے کہا کہ زرعی مداخل کی قیمتوں میں آئے روز اضافہ سے زراعت تباہی کے دھانے پر پہنچ چکی ہے ۔ کسانوں نے شوگر ملوں کی لوٹ مار بند کرانے اور کپاس کی قیمتیں بڑھانے کا مطالبہ کیا ۔اورسب سڈی بحال کرنے،بجلی، کھاد،ڈیزل سستی کر نے مطالبات کیے گئے ۔ضلع بھکر میں کسان بورڈ کی تنظیم نو کر کے نو منتخب ارکان سے مرکزی صدر کسان بورڈ پاکستان سردار ظفر حسین نے حلف لیا جبکہ ضلع لیہ میں جنرل سیکرٹری ملک محمد رمضان روہاڑی نے تنظیم نو کر کے نومنتخب عہدیداران سے حلف لیا۔حلف برداری کی تقریبات میں سینکڑوں کسانوں کے علاوہ صحافیوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔کسانوں کے درجنوں اجتماعات سے خطاب کر تے سردار ضفر حسین اور ملک محمد رمضان روہاڑی نے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا کہ حکومت تیل ڈیزل اور بجلی کی قیمتوں میں بلاجواز بے انتہا اضافے کو واپس لے ۔اور کھاد ،کیڑے مار ادویات،زرعی مشینری پر سیلز ٹیکس واپس لے کر سب سڈی بحال کرے کیونکہ اس اضافے سے زرعی معیشت تباہ و برباد ہو جائے گی اور ہمارا ملک دانہ دانہ کا محتاج بن جائے گا ۔مقررین نے کہا کہ حکومت ہمارے جائز مطالبات مان لے وگرنہ اسمبلیوں کے باہر احتجاجی دھرنے دیے جائیں گے  ۔       25-2-2012                  شعبہ نشرواشاعت کسان بورڈ پاکستان

یہ بھی پڑھیں  کراچی سمیت سندھ کےمختلف علاقوں میں فائرنگ، کاروباراورٹرانسپورٹ بند

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker