تازہ ترینعلاقائی

لاہور: لیلیٰ کو پانے کیلئے خودکشی کا ڈرامہ، مجنوں کو پولیس نے گرفتارکرلیا

لاہور(مانٹیرنگ سیل) لڑکی کی محبت میں گرفتار ہوکر پولیس لائنز میں پستول کنپٹی پر رکھ کر ڈرامہ کرنے والے ناکام مجنوں کو پولیس نے قابو میں کرکے حوالات کی سیر کرادی۔ گوالمنڈی کا رہائشی کامران پولیس لائنز کی ایک لڑکی کی محبت میں گرفتار ہو گیا لیکن لڑکی جانب سے مسلسل انکار کے بعد اس کی محبت کا صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا اورکسی بالی ووڈ فلم کی ہیرو کی طرح موصوف نے کنپٹی پر پستول رکھ کر لڑکی کو شادی کے لیے رضامند کرنے کی کوشش کی اور نہ ماننے کی صورت میں خود کو مارنے کی دھمکی بھی دے ڈالی۔ کچھ دیر تک نوجوان کی یہ ڈرامے بازی چلتی رہی اوراس دوران وہاں موجود پولیس اہلکاروں نے ’’مجنوں 2014‘‘ کو  سمجھانے کی بھی کوشش کی لیکن ہائے ری محبت عاشق بھی اپنی بات پراڑا رہا اورپستول کنپٹی پر رکھ کرآگے بڑھنے لگا اس دوران وہاں موجود اہلکار عبدالجبار نے حاضردماغی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اس کی پستول پر ہاتھ دے مارا جس پر اس نے فائرنگ کردی لیکن خوش قسمتی سے کوئی نقصان نہیں ہوا تاہم اسی دوران پولیس اہلکارنے  نوجوان کو قابو کرلیا۔ پولیس نے نوجوان کو گرفتار کرکے تھانے منتقل کردیا، ابتدائی تحقیقات کے مطابق کامران کی عمر 26 سال ہے اور اس نے شراب بھی پی رکھی تھی جب کہ اس کہنا ہے کہ اس نے پستول ایک شخص سے خریدی ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ لڑکے کے خاندان کو بلا لیا گیا ہے اور اس حوالے سے تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!