پاکستان

اسلام آباد: توہین عدالت کیس،وزیراعظم گیلانی کاسیاسی مستقبل اورقانون دانوں کےتجزیے

اسلام آباد : قانون دانوں اور سیاسی تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کا کیس اب اہم مرحلے میں داخل ہو گیا ہے۔ اگر انہیں قصور وار قرار دیا گیا تو وہ عہدے پر برقرار نہیں رہ سکیں گے۔ وزیراعظم گیلانی پر فرد جرم عائد ہوتے ہی ان کے سیاسی مستقبل کی بحث بھی چھڑ گئی ہے۔ جسٹس ریٹائرڈ طارق محمود کا سما سے گفتگو میں کہنا تھا کہ اصل عدالتی کارروائی تو آئندہ سماعت سے شروع ہو گی۔ جسٹس ریٹائرڈ سعید الزماں صدیقی  کا کہنا تھا کہ اگر وزیراعظم کو سزا ہوئی تو صدر سزا تو معاف کر سکتے ہیں لیکن ان کی نااہلی ختم نہیں ہو سکتی۔ معروف تجزیہ کار عارف نظامی کا کہنا تھا کہ معاملہ آئینی سے زیادہ سیاسی ہے۔ تجزیہ کار اور سیاستدان ایاز امیر کا کہنا تھا کہ فی الحال تو معاملہ مارچ تک ٹل گیا ہے۔ تجزیہ کاروں نے اس بات پر اتفاق کیا ہے کہ عدلیہ کے فیصلوں پر عملدرآمد کیا جانا ضروری ہے۔ حکومت کو چاہیئے کہ معاملات کو الجھانے اور انا کا مسئلہ بنانے کی بجائے عدلیہ کے فیصلوں کا احترام کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں  سپریم کورٹ: نیب سےکرپشن کے50بڑے مقدمات کی تفصیلات طلب

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker