علاقائی

لاہور:کاہنہ میں ایک ہفتے کے دوران درجنوں ڈکیتی کی وارداتیں،عوام نے فیروزپورروڈ2گھنٹے تک بلاک رکھی

کاہنہ﴿امتیاز علی شاکر﴾کاہنہ وگردونواح کے علاقوں میں ایک ہی ہفتے میں درجنوں ڈکیتی کی وارداتیں ،پولیس ملزمان کوگرفتارکرنے میں ناکام ،عوام سراپا احتجاج ،تفصیلات کے مطابق تھانہ کاہنہ اور گردونواح کے علاقوں شالیمارٹائون،گجومتہ،مین شہزادہ روڈ،تھہ پنجو،دھپ سڑی،سلیم ٹائون وغیرہ میں گزشتہ کئی دنوں سے مختلف وارداتوں میں دن دیہاڑے ڈکیتی کی اندھی وارداتیں معمول بن گئیں،جس پر عوام نے کئی بار تھانہ کاہنہ میں اس کے متعلق درخواستیں دیں مگر پولیس کے کانوں پر جوں تک نہ رینگی،گزشتہ دنوں شالیمار ٹائون میں آصف کاشف موبائل شاپ سے ایک ہی ہفتے میں تیسری ڈکیتی کی واردات ہوئی لیکن پولیس ملزمان کوگرفتار نہ کرسکی،اسی روڈپر گزشتہ دنوں معروف سٹیج اداکارہ ثنائ ملک سے بھی نقاب پوشوں نے اجتماعی ذیادتی کیساتھ ساتھ نقدی اور موبائل لوٹ لیا تھا،جس کے بھی ملزم ابھی تک گرفتار نہ ہوسکے،گزشتہ روز سینکڑوں لوگوں نے مین فیروزپورروڈکوبلاک کر کے پولیس کے خلاف سخت نعرے بازی کی اور ملزمان کو گرفتارکرنے کا مطالبہ کیا،عوام نے شدیدنعرے بازی کی اور کہا کہ جب سے ایس ایچ او سرفراز شاہ نے تھانہ کاہنہ کا چارج سنبھالا ہے تب سے علاقے میں جرائم پیشہ لوگوں کی آمدورفت ذیادہ ہوگئی ہے،عوام نے بتایا کہ پولیس ڈکیتوں کیساتھ ملی ہوئی ہے۔ایس پی معروف واہلہ طارق شہزاد،آس محمد ودیگرکو یقین دہانی کروائی کہ وہ اپنی نگرانی میں دوہفتے کے دوران ڈکیتوں کو گرفتار کرلیں گے۔لیکن عوام کا کہنا ہے کہ مقامی پولیس ڈکیتوں سے منتھلیاں وصول کرتی ہے اور اپنی سرپرستی میں وارداتیں کرواتی ہے۔عوام نے ٹائر جلا کر سڑک کو2گھنتے تک بلاک کئے رکھا اور شدیدنعرے بازی کرتی رہی۔

یہ بھی پڑھیں  چنیوٹ : تعلیمی نظام کھوہ کھاتے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker