علاقائی

لاہور:سندھ اورجنوبی پنجاب میں گندم کی فصل جلدآنے والی ہے مگر ابھی تک گندم پالیسی کا واضع اعلان نہیں کیا،ملک رمضان

لاہور ﴿پریس ریلیز﴾ کسان بورڈ پاکستان کی گندم کمیٹی کے اجلاس کے بعد کسان بورڈکے مرکزی جنرل سیکرٹری ملک محمد رمضان روہاڑی نے صحافیوں گفتگو کر تے کہا کہ چاروں صوبوں بالخصوص صوبہ سندھ اور جنوبی پنجاب کے اضلاع میں گندم کی نئی فصل جلد منڈیوں میں آنے والی ہے مگر تاحال حکومت پنجاب اور حکومت سندھ نے گندم خریداری کے لیے اپنی پالیسی کا واضع اعلان نہیں کیا۔ایسا لگتا ہے کہ حکمران طبقہ جان بوجھ کر گندم کی خریداری کا مصنوعی بحران پیدا کر کے سرمایہ دار فلور مل مالکان اور آڑھتیوںکی تجوریاں بھر نا چاہتا ہے۔ حکومت آئے روز عوام سے لوٹ مار کے نت نئے طریقے ڈھونڈ کرکبھی کپاس،کبھی چاول،کبھی گنا اور مکی کے کاشتکاروں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہی ہے اور قومی خزانے کو اپنی عیاشیوں پر خرچ کر کے’’بابر بہ عیش کوش کہ عالم دوبارہ نیست ‘‘کے مقولے پر عمل کر رہی ہے۔گندم کی صحیح قیمت نہ ملنے اور زرعی مداخل کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے سے سے کسان گندم کی کاشت کم کر نے پر مجبور ہونگے جس سے اگلے سال گندم کی پیداوار نہایت کم ہوجائے گی۔ کسان بورڈ کی گندم کمیٹی کے شرکا سرفراز احمد خاں،منیر احمد بودلہ،حاجی محمد رمضان اور دیگر نے متفقہ طور پر حکومت سے مطالبہ کیا کہ گندم کی خریداری کا ٹارگٹ بڑھایا جائے،اور باردانہ کی تقسیم سے محکمہ مال کے کرپٹ اہلکاروں کے رول کو ختم کر کے تمام کاشتکاروں کو بلا امتیاز باردانہ دیا جائے۔ پرچیز کمیٹیوں اور خریداری مراکز میں کسان تنظیموں کے حقیقی نمائندوں کو شامل کیا جائے اور گندم کی خریداری پالیسی کا فوری اعلان کیا جائے۔

یہ بھی پڑھیں  اوکاڑہ : روٹھی بیوی کو منانے میں ناکامی پر نوجوان نے تیز دھار آلہ سے وار کرکے آٹھ سالہ سالے کو زخمی کر دیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker