پاکستانتازہ ترین

ایف آئی اے کی کارروائی‘ بجلی کا میٹر ریورس کرنے کا ماہر گرفتار‘لیپ ٹاپ اور درجنوں میٹر قبضے میں لے لیا

لاہور(نمائندہ خصوصی) صوبائی دارالحکومت میں وفاقی تحقیقاتی ادارہ نے لیسکو کے میٹروں کو ریورس کرنے کے ماہر کو سافٹ ویئر‘ لیپ ٹاپ اور درجنوں میٹروں سمیت رنگے ہاتھوں پکڑ کر اس کے قبضہ سے لیسکو کے درجنوں میٹر برآمد کرکے اس کیخلاف مقدمہ درج کرلیا۔ ایف آئی اے کے تفتیشی آفیسر نے پاک نیوز لائیو سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملزم سے تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔ لیسکو کے بہت سے افسران اور اہلکاروں کے بے نقاب ہونے کا امکان ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایف آئی اے کے ڈائریکٹر ڈاکٹر عثمان انور کو خفیہ اطلاع موصول ہوئی کہ ایک شخص لیسکو کے میٹر ریورس کرنے کا ماہر ہے اور اس کے پاس ایسا سافٹ ویئر موجود ہے جس سے وہ میٹر کو بغیر نقصان پہنچائے باآسانی میٹر ریورس کرتا ہے۔ لیسکو کے آفیسر ‘ ملازمین اس کی خدمات سے مستفید ہورہے ہیں۔ ان کی ہدایت پر اسسٹنٹ ڈائریکٹر خالد انیس کی سربراہی میں ایک ریڈنگ ٹیم تشکیل دی گئی جس نے بلال گنج کے علاقے ملک پارک کے مکان نمبر7 ‘ نظام سٹریٹ میں چھاپہ مار کر محمد رفیق ولد ولی محمد کو اس وقت گرفتار کیا جب وہ اپنے گھر میں سافٹ ویئر‘لیپ ٹاپ اور درجنوں میٹر برآمد ہونے پر ریڈنگ پارٹی نے اسے گرفتار کرکے اس کیخلاف مقدمہ نمبر53/15درج کرکے تفتیش شروع کر دی۔ تفتیشی آفیسر کے مطابق ملزم رفیق نے ابتدائی طور پر اعتراف کیا ہے کہ وہ اس سے قبل چند برس پہلے بھی میٹر ریورس کرتا تھا۔ اس وقت وہ یہ کام تار کے ذریعے کرتے تھے۔ اب اس نے ایک سافٹ ویئر اور ہارڈویئر تیار کرلیا ہے جس کی مدد سے وہ یہ کام باآسانی کرتا ہے۔ مختلف سب ڈویژنوں کے لائن مین‘ لائن سپرنٹنڈنٹس سمیت دیگر ملازمین اس سے معقول معاوضہ پر یہ کام کروارہے ہیں۔ تفتیشی آفیسر آفتاب وٹو نے بتایا کہ اس جرم میں ملوث لیسکو کے بہت سے پردہ نشین بے نقاب ہونے کے امکانات ہیں۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button