تازہ ترینعلاقائی

لالہ موسیٰ:ہمیں دنیاکےمقابل چلناہےتودین ودنیا کی تفریق کو ختم کرنا ہے،قمرزمان کائرہ

لالہ موسیٰ(نامہ نگار)وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات قمرزمان کائرہ نے کہا ہے بندوق گولی کا راستہ اختیار کرنے والے جاہل اور کم علم ہیں،انتہا پسندی کی لہر نے دینی علوم کی درسگاہوں کو دھاندلا دیا ہے،اسلام بزور شمشیر تلوار (نہیں)بلکہ حسن اخلاق سے پھیلا،بچوں کے سکول گرانے والے مسلمان نہیں ،حیوان ہیں،جو معصوم بچوں کوگولی مار دیتے ہیں،انہوں نے ان خیالات کا اظہار بوکن شریف میں فکر اقبال کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ یہ فکری تحریک ہے ،لاکھوں قربانیاں دے کر پاکستان صرف عبادات یا روزگار کیلئے نہیں بلکہ اصل فکر یہ تھی مسلمان ایک ریاست میں مذہب اور دینی ثقافت کے مطابق نظام بنا سکیں انہوں نے کہا کہ نبی کریمؐ سے زیادہ دین کی فکر کسی کو نہ تھی انہوں نے کبھی کسی عیسائی یا یہودی کیلئے عرب کی زمین تنگ نہیں اور نہ ہی کسی کا گلا کاٹا انہوں نے کہا کہ آج ہم قومی بحران کا شکاراس لئے ہی کہ ہم اپنے اسل افکار بھول گئے ہیں ہم اپنے دینی و سیاسی اصول بھول گئے ہیں انہوں نے کہا کہ ہماری درس گاہیں دنیا یا دین میں پڑی ہیں ہمیں دنیا کے مقابل چلنا ہے تو دین اور دنیا کی تفریق کو ختم کرنا ہے ہر تعلیمی ادارے میں سارے علوم پڑھانے چاہیں،انہوں نے کہا کہ ہم دنیا کو نبی کریمؐ کی محبت اور امن کے ساتھ جئیں گے گولی کا راستہ وہ اختیار کرتا ہے جو علم میں کم تر ہوتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  حریتِ فکرکی تدفین۔۔۔کیا اشرافیہ اپنے مقاصد پورے کر پائے گی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker