پاکستانتازہ ترین

سرگودھا:وزیراعلی پنجاب کامینارپاکستان کےنیچےاحتجاجی کیمپ سیاسی ڈرامہ ہے،گورنرپنجاب

سرگودھا﴿تحصیل رپورٹر﴾گورنر پنجاب سردار لطیف خان کھوسہ نے سابق سینیٹر مہر خداداد خان لک مرحوم کی وفات پر ان کے اہلخانہ کے ساتھ تعزیت کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیر اعلی پنجاب کا مینار پاکستان کے نیچے احتجاجی کیمپ سیاسی ڈرامہ ہے پنجاب پولیس کی بھری نفری پہلے ہی وزیر اعلی اور اس کے بیٹے اور دیگر اہل خانہ کی حفاظت پر معمور ہے ۔صوبے میں ڈاکے ‘چوریاں اور قتل کی وارداتوں میں روزبروز اضافہ ہو رہا ہے امن امان کی صورتحال انتہائی خراب ہے پولیس شریف خاندان کی حفاظت کی بجائے عوام کی حفاظت کیلئے تعینات کی جاتی تو ٹیوٹا کے جنرل مینجر جاوید اقبال کا قتل نہ ہوتاپنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر راجہ ریاض احمد‘سابق ایم این اے سردارشجاع خان بلوچ ‘سابق صوبائی وزیر چوہدری محمد خان جسپال ‘سا بق ممبران صوبائی اسمبلی ملک غلام عباس نسوآنہ‘ملک مختار احمد اعوان بھی اس موقع پر موجود تھے۔گورنر نے کہا کہ مہر خداداد خان لک ہماری پارٹی کا سرمایہ تھے میں پارٹی کے شریک چیئرمین صدر آصف زرداری کی ہدایت پر مہر خداداد خان لک کے اہل خانہ سے تعزیت کیلئے آیا ہوںمہر خداداد خان لک ایک منجھے ہوئے سیاستدان ‘شرافت ‘دیانت اور وفاداری کی مثال تھے انہوں نے صحافیوں کے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ وفاقی حکومت 120ارب روپے کے محاصل دئیے ہیں صوبوں کو بجلی پیدا کرنے کی مکمل آزادی ہے ۔واپڈا کے نادہندگان اگر بل ادا کردیں تو پنجاب میں لوڈشیڈنگ ختم ہوجائے گی ۔انہوں نے کہا کہ بڑا بھائی وزیر اعظم کو نہیں مانتا چھوٹا صدر اور مسلم لیگ کے ارکان قومی اسمبلی سپیکر کو نہیں مانتے ۔شریف برادران کا انداز جمہوری نہیں ہے پہلے انہوں نے سپریم کورٹ پر حملہ کیا اب وفاق پر حملہ کررہے ہیں انہیں مرکز کا فوبیا ہوگیا ہے ۔لیکن وہ جان لیں کہ اگلی باری پھر زرداری کی ہے۔گورنر نے مزید کہا کہ وزیر اعلی پنجاب کو جھوٹ بولنے کی عادت ہے۔انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس کے بیٹے ارسلان افتخار پرکروڑوں روپے وصولی کا الزام دراصل چیف جسٹس پر الزام ہے کیونکہ الزام علیہان کے مطابق چیف جسٹس کے بیٹے نے کروڑوں روپ مختلف عدالتی کیسزکی وجہ سے کروڑوں روپے دئیے تھے ۔انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس نے کیس سماعت کرنے والے بینچ سے خود کو الگ کر کے ایک مستحسن قدم اٹھایا ہے ۔انہوں نے کہا کہ مختلف اخبارات میں چھپنے والی سٹوری بتلا رہی ہے کہ کس طرح سارا خاندان لندن میں رہائش پذیررہا اور بڑے بڑے شاپنگ سینٹرز سے شاپنگ کرتے رہے انہوں نے کہا کہ الزامات کی مکمل تحقیقات ہونی چاہئیںکیونکہ یہ ایک بہت بڑے ادارے پر الزام ہے جس سے عدلیہ کی بدنامی ہوئی ہے ۔

یہ بھی پڑھیں  غیر ملکی تارکین وطن کو سفر،روزگار،رہائش دینے والے سعودی شہریوں کیلئے سزاؤں کا اعلان

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker