بین الاقوامیتازہ ترین

ایک سروے کے مطابق برطانوی عوام کی اکثریت اسرائیلی جارحیت کے خلاف ہوگئی

لندن(مانیٹرنگ سیل) معصوم فلسطینیوں پر وحشیانہ اسرائیلی مظالم نے اسرائیل کے قریبی ترین ممالک کے لوگوں کو بھی ہلاکر رکھ دیا ہے اور ایک حالیہ سروے میں 62فیصد برطانوی عوام نے اسرائیل کو جنگی جرائم کا مرتکب قرار دے دیا ہے۔برطانوی ادارےYouGovنے یہ سروے 27اور28جولائی کی تاریخوں میں کیا۔سروے سے یہ نتیجہ بھی سامنے آیا ہے کہ اسرائیل کے سب سے بڑے حمایتی امریکہ کے عوام کی رائے بھی تبدیل ہونا شروع ہو گئی ہے اور اگرچہ امریکی حکومت اسرائیل کی حمایت میں شرمناک ڈھٹائی کا مظاہرہ کر رہی ہے لیکن عوام میں یہ شعور بڑھ رہا ہے کہ اسرائیل نہتے فلسطینیوں کی نسل کشی کر رہا ہے۔ اس سے پہلے اخبار ”سنڈے ٹائمز“کے ایک سروے میں52فیصد برطانوی عوام نے فلسطین پر اسرائیل بمباری کو بے انصافی قرار دیا تھا۔ ”پیوریسرچ سنٹر“ کے ایک سروے میں18سے 29سال کے امریکیوں کی 29فیصد تعداد نے حالیہ تنازعے کاذمہ دار اسرائیل کو قرار دیا ہے۔”گیلپ“ کے ایک سروے میں بتایا گیا ہے کہ غیر سفید فارم امریکیوں کی بھاری اکثریت فلسطین پر اسرائیلی جارحیت کو غیر منصفانہ سمجھتی ہے۔سی این این کے سروے میں43فیصد لوگوں نے اسرائیلی کاروائیوں کو جائز تسلیم کرنے سے انکار کر دیا ۔”یوکے کرسچین“کے سروے میں بھی تقریبا 36فیصد نے فلسطینوں کی حمایت کی جبکہ 17فیصد نے اسرائیل کی حمایت کی ۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button