پاکستانتازہ ترین

ستارہ جرأت ہولڈرملالہ یوسف زئی قاتلانہ حملے میں شدیدزخمی

مینگورہ (نمائندہ پاک نیوز) پاکستان میں ستارہ جرات حاصل کرنے والی والی 13سالہ بچی ملالہ یوسف زئی قاتلانہ حملے میں شدیدزخمی ہوگئی ہیں ۔ نمائندے کے مطابق واقعہ ضلع سوات کے علاقے مینگورہ میں پیش آیا مقامی وقت کے مطابق قریبا12:15بجے خوشحال پبلک اسکول سے گھر جاتے ہوئے ملالہ یوسف زئی کو شناخت کے بعد نشانہ بنایاگیا۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ ایک شخص نے پیدل چل کراسکول وین کاراستہ روکا اور استفسار کیا کہ ملالہ یوسف زئی کون ہے جس کے بعد اسے گولیاں ماریں ،فائرنگ سے مزید 2بچیاں بھی زخمی ہوئی ہیںجنہیں طبی امداد کے لیے ڈسٹرکٹ ہیڈکواٹر سیدوشریف اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ اسپتال ذرائع کے مطابق ملالہ یوسف زئی کو گردن میں 2گولیاں لگی ہیں جس کی وجہ سے اس کی حالت تشویشناک ہے ،بچی کاآپریشن کیا جارہا ہے، ڈاکٹر ز اس کی زندگی بچانے کے لیے سرتوڑ کوشش کررہے ہیں۔ واضح رہے کہ 13سالہ ملالہ یوسف زئی نے شمالی صوبے خیبرپختون خوا کےشورش زدہ ضلع سوات میں امن کے لیے اہم کردار اداکیا تھا، بچی کو حیران کن خدمات کے صلہ میں ستارہ جرات سے نوازاگیا جب کہ اسے عالمی امن ایوارڈ کے لیے منتخب کیا گیا ۔ ملالہ نے مشکل وقت میں تعلیم کے فروغ کے لیے کام کیا اسے ڈائری گرل کے قلمی نام سے بھی جانا جاتا ہے۔  نمائندے کا کہنا ہے کہ ملالہ یوسف زئی پرائیوٹ اسکول میں تعلیم حاصل کررہی تھی ،قیام امن کے حوالے سے شہرت حاصل کرنے کے بعداسےسرکاری گارڈبھی دیا گیا تھا تاہم اسے کوئی ہتھیار فراہم نہیں کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں  بھائی پھیرو:انا اورنکئی خاندان کے موجودہ اورسابقہ اسمبلی ممبران کے دس اُمیدوار چئیرمین کے اُمیدوار بن گئے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker