پاکستانتازہ ترین

ملک ریاض ان کےصاحبزادےعلی ریاض سمیت 9 ملزمان کواشتہاری قراردےدیاگیا

راولپنڈی (بیورو رپورٹ) راولپنڈی کی انسداد بدعنوانی عدالت نے اراضی قبضہ کیس میں بحریہ ٹاؤن کے سابق سربراہ ملک ریاض ان کے صاحبزادے علی ریاض سمیت 9 ملزمان کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے ان کی جائیداد کی تفصیلات طلب کر لیں۔ ملک ریاض سمیت دیگر ملزمان کی گرفتاری کے احکامات عدالت نے جاری کر رکھے تھے تاہم ان کو عدالت میں پیش نہ کیے جانے پر عدالت نے تمام ملزمان کو اشتہاری قرار دے دیا۔ ملک ریاض اور ان کے بیٹے پر الزام ہے کہ انہوں نے مختلف لوگوں سے 1401 کنال اراضی لی تھی اور اسے غلط طریقے سے اپنے نام کروا لیا تھا جس کے بعد تحقیقات کی گئیں اور معاملہ ان کے خلاف ثابت ہو گیا جس کے انسداد بدعنوانی کی عدالت نے ان کے وارنٹ گرفتاری جاری کیے۔ جس پر ملک ریاض اور دیگر ملزمان نے لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ سے رجوع کیا جہاں عدالت عالیہ نے انسداد بد عنوانی عدالت سے رجوع کر نے کی ہدایت کی تھی لیکن وہ عدالت میں حاضر نہیں ہوئے جس پر عدالت نے ملک ریاض اور دیگر ملزمان کو اشتہاری قرار دیتے ہوئے ان کو گرفتار کر کے عدالت میں پیش کر نے کا حکم دیا ہے ۔ عدالت نے پراسیکیوٹر سے ملک ریاض اور دیگر ملزمان کی جائیداد کی تفصیلات بھی ایک ہفتہ کے دوران طلب کر لی ہیں جس کے بعد ملزمان کی جائیداد کی کہ کسی کا فیصلہ بھی کیا جا سکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button