تازہ ترینفن فنکار

گلوکارمسعود رانا کو آج یاد کیا جارہا ہے

کراچی(نامہ نگار) پاکستان کے محمد رفیع کے نام سے مشہور مسعود رانا نے تین عشروں تک پاکستان کی فلمی موسیقی پر حکمرانی کی۔۔ آج ان کی برسی منائی جا رہی ہے۔  مسعود رانا کا خاندان مشرقی پنجاب کے شہر جالندھر سے سندھ کے ضلع میر پور خاص منتقل ہوا ۔ انہوں نے فنی کیرئیر کا آغاز ریڈیو پاکستان حیدر آباد سے کیا ۔بطور پلے یک سنگر ان کی پہلی فلم ”بنجارن ” تھی۔ مسعود رانا  انیس سو چونسٹھ میں  لاہور منتقل ہوئے اور وہ جلد ہي  اردو اور پنجابی فلموں کے مقبول ترين گلوکار بن گئے۔ انھوں نے تين عشروں تک پاکستاني فلمي موسيقي پر حکمراني کي ۔ مسعود رانا نے ”دومٹیاراں ” اور” شاہی فقیر”میں ہیرو کا کردار بھي کيا۔ مسعود رانا نے اپني جوشيلي آواز ميں ملي نغمے بھي گائے۔ جو آج بھي لہو گرما دينے کي صلاحيت رکھتے ہيں۔ مسعود رانا نے اردو اور پنجابی زبانوں میں تین تین سو سے زائد گيت گائے۔۔جن کا آج بھي کوئي نعم البدل نہيں۔۔ اور ساڑھے پانچ سو ساے زائد فلموں کے لیئے گانے ریکارڈ کروائے۔
مسعود رانا 4اکتوبر 1995کو اس دنيائے فاني سے کوچ کر گئے تھے  مگر وہ اپنے لازوال گیتوں کي وجہ سے مداحوں کے دلوں سے کبھي محو نہیں ہوں گے

یہ بھی پڑھیں  اسلام آباد،6 ملزمان گرفتار 10بو تلیں شراب ، 2پسٹل بر آمد

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker