تازہ ترینعلاقائی

میاں چنوں: گورنمنٹ مڈل سکول کے ہیڈ ماسٹراور چوکیدارکا تیسری کلاس کے طالبعلم پر وحشیانہ تشدد

میاں چنوں(نامہ نگار) نواحی گاؤں میں گورنمنٹ مڈل سکول کے ہیڈ ماسٹراور چوکیدارکا تیسری کلاس کے طالبعلم پر وحشیانہ تشدد،تشدد سے ہاتھ اور بازو شدید متاثر،شکایت لے کر جانے پر لواحقین اور اہل محلہ پر بھی چوکیدار اور اسکے رشتہ دار کا تشدد،متاثرین کا وزیر اعلیٰ پنجاب سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ،تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں16/8BRکے رہائشیوں شہزاد حسین ولد غلام حسین اور محمد صغیر ولد بشیر احمد نے تھانہ تلمبہ میں دی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ تیسری کلاس کا طالبعلم اسد شہباز عمر تقریباً10سال جوکہ گورنمنٹ مڈل سکول 16/8BRمیں زیر تعلیم ہے کو ہیڈ ماسٹر سکول ھذا شاہد قوم جٹ،چوکیدار منیر احمد ولد غوث محمد اور اس کا رشتہ دار محمد وحید جوسرکاری ملازم نہ ہے لیکن منیر احمد اکثر اسے اپنی جگہ پر بلا لیتا ہے نے بلاوجہ کمرہ میں بند کرکے لاتوں اور مکوں سے شدید تشدد کانشانہ بنایا،جس سے طالبعلم کی کلائی پر شدید چوٹ آئی اور جوڑ متاثر ہوا،گھر پہنچنے پر طالبعلم کا چچا دیگر اہل محلہ کہ ہمراہ تشدد کی وجہ معلوم کرنے سکول گیٹ پر پہنچا تو چوکیدار منیر احمد نے انہیں اندر جانے سے روکا،سائلین نے جب بچے کو مارنے کی وجہ پوچھی تو چوکیدار نے اپنے رشتہ دار محمد وحید کے ساتھ ملکر طالبعلم کے چچا شہزاد اور ہمسائے محمد صغیر کو بھی تشدد کا نشانہ بنایااور گالیاں دیں ،متاثرین نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے فوری نوٹس لینے کامطالبہ کیاہے،رابطہ کرنے پر مذکورہ ہیڈ ماسٹر نے بتا یا کہ بچے کو دیوار پھلانگنے کی وجہ سے چوٹ لگی ہے،اور اسی وجہ سے میں نے اسے ڈانٹا چوکیدار چھٹی پر تھا ،بچے کے لواحقین کے ساتھ چوکیدار کی لڑائی سکول کے باہر ہوئی ہے ،اس وجہ سے میں نے چوکیدار کاٹرانسفر کردیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  وزیراعظم نواز شریف ایک روزہ دورے پر کراچی پہنچ گئے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker