پاکستانتازہ ترین

ریٹیلرزپرموبائل سمزکی فروخت پرپابندی، ٹیلی کام انڈسٹری میں تشویش

اسلام آباد (بیورو رپورٹ) ریٹیلرز پر موبائل سمز کی فروخت پر پابندی سے ٹیلی کام انڈسٹری میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے، فیصلے پر عملدرآمد یکم دسمبر سے ہوگا جس سے سالانہ ٹیکس میں 5 ارب روپے کی کمی کے علاوہ ٹیلی کام آپریٹرز کو مجموعی طور پر 2 ارب روپے کے نقصان کا سامنا کرنا پڑے گا۔ ذرائع کے مطابق ریٹیلرز پر موبائل فون سمز کی فروخت پر پابندی سے نہ صرف عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا بلکہ ٹیلی کام انڈسٹری بھی متاثر ہوگی۔ فرنچائزڈ کی بندش سے لاکھوں ملازمین بھی بے روز گار ہو جائیں گے۔ ایک محتاط اندازے کے مطابق اس وقت ملک بھر میں کام کرنے والے 5 ٹیلے کام آپریٹرز کی ایک لاکھ دکانوں پر 25 ملین سمز پڑی ہیں جن کی پیشگی ادائیگی کی جا چکی ہے۔ ریٹیلرز سے سمز کی واپسی پر ہر ٹیلے کام آپریٹر کو تقریباً 400 ملین روپے کا نقصان ہو گا۔ اس کے علاوہ یکم جنوری 2013ء سے کوئی فرد اپنے نام پر 5 سے زائد سمز بھی نہیں رکھ سکے گا۔

یہ بھی پڑھیں  بھائی پھیرو:حکومت پنجاب نے قرعہ اندازی کے ذریعے آدھی قیمت پر زرعی آ لات تقسیم کردیے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker