پاکستانتازہ ترین

چند اندرونی اوربیرونی قوتیں انتخابات کو ملتوی کرواناچاہتی ہیں، منورحسن

munawar hussainلاہور(نمائندہ خصوصی) جماعت اسلامی پاکستان کے امیر سید منور حسن نے کہا ہے کہ چند اندرونی اور بیرونی قوتیں انتخابات کو ملتوی کروا کر ملک میں انارکی پھیلانا چاہتی ہیں، انتخابات میں جتنی تاخیر ہوگی بدامنی اور انتشار مزید بڑھے گا اور ملک مزید بحران پیدا ہونگے ۔ قوم انتخابات کے خلاف ہونے والی ان سازشوں کو ناکام بنانے کیلئے متحد ہوجائے ۔جماعت اسلامی الیکشن ملتوی کرانے کی کسی سازش کو کامیاب نہیں ہونے دے گی ۔عوام جلد ازجلد نئے انتخابات کا انعقادچاہتے ہیں تاکہ وہ پیپلز پارٹی کی کرپٹ اتحادی حکومت سے جان چھڑاکر اپنے نمائندوں کا دوبارہ انتخاب کرسکیں ۔ملک میں امن و امان کی بگڑتی صورتحال کو کنٹرول کرنے اور دہشت گردی سے جان چھڑوانے کانئے اور فوری انتخابات کے علاوہ کوئی حل نہیں۔ملک میں تبدیلی کیلئے کسی دوسرے راستے کو عوام کسی صورت قبول نہیں کریں گے ۔حکومت فوری طور پر متفقہ نگران سیٹ اپ قائم کرکے انتخابات کی تاریخ کا اعلان کرے، تاکہ عوام میں پائی جانے والی غیر یقینی صورتحال اور بے چینی کا خاتمہ ہو۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں کیا۔سید منور حسن نے کہا کہ جمہوریت پر یقین رکھنے والی تمام سیاسی و دینی جماعتیں ملک میں نئے انتخابات کا مطالبہ کررہی ہیں حکومت کی نااہلی اور کرپشن کی وجہ سے عوام سخت مایوس ہیں اور وہ موجودہ حکومت کو مزید برداشت کرنے کو تیا ر نہیں ہیں ۔اگر حکومت نے اپنے اقتدار کو طول دینے یا اپنی مرضی کا کوئی سیٹ اپ لانے کی کوشش کی تو عوام کے اندر پکنے والا لاوا پھٹ پڑے گا اور حکمرانوں کوکہیں جائے پناہ نہیں ملے گی ۔انہوں نے کہا کہ قوم تو موجودہ حکمرانوں کی نااہلی کرپشن سے دوسال میں ہی تنگ آگئی تھی اور ملک میں مڈٹرم انتخابات کا مطالبہ زور پکڑگیا تھا لیکن حکومت فرینڈلی اپوزیشن کی مددسے اپنے اقتدارطول دینے میں کامیاب ہوگئی ،انہوں نے کہا کہ اب جبکہ حکومت اپنی آئینی مدت پوری کرچکی ہے اس کیلئے بہتر یہی ہے کہ آئینی تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے ایک غیر جانبدار اورسب کیلئے قابل قبول عبوری سیٹ اپ قائم کرکے انتخابات کی تاریخ کا اعلان کردے ۔مہنگائی بجلی کی لوڈ شیڈنگ اور بجلی تیل اور گیس کی قیمتوں میں بے تحاشا اضافے نے عوام کا جینا حرام کررکھا ہے ۔حکمرانوں کو اب بھی خوش فہمی ہے کہ عوام انہیں جھولیاں بھر بھر کر ووٹ دیں گے تو انہیں چاہئے کہ فوری انتخابات کرائیں تاکہ انہیں آٹے دال کا بھاؤ معلوم ہوجائے ۔انہوں نے کہا کہ حکمرانوں نے اپنے پورے دور اقتدار میں عوام کو خون کے آنسو رلائے ہیں ۔ ملکی سا لمیت اور خود مختاری داؤ پر لگی رہی ۔ روشنیوں کے شہر کراچی کوقتل گاہ میں تبدیل کر دیا اور بلوچستان میں امن و امان کی صورتحال انتہائی تشویشناک رہی۔ کرپشن کی داستانیں زبان زد عام ہیں اور اب تو نیب کے چیئرمین بھی دہائی دے رہے ہیں کہ حکمران ملک کو لوٹ کر کھا گئے ہیں اور روزانہ ہونے والی کرپشن بارہ سے پندرہ ارب روپے تک پہنچ چکی ہے جبکہ 60سالوں میں ملک پر اندرونی اور بیرونی قرضوں کا حجم پانچ سالوں میں بڑھ کر دوگنا ہوگیا ہے ۔ عوام تعلیم ، صحت اور روزگار کی سہولتوں سے محروم ہیں، بجلی اور گیس کے بحران نے معیشت کے پہیے کو بری طرح جام کردیا ہے اور عوام کو ریلیف دینے میں حکومت ہر شعبے میں بری طرح ناکام ہوئی ہے ۔ان حالات میں حکمرانوں کیلئے بہتریہی ہے کہ وہ موقع کو غنیمت اپنی رہی سہی ساکھ کو بچانے کیلئے فوری انتخابات کا اعلان کردیں۔

یہ بھی پڑھیں  منور حسن کا مصر کی صورتحال پر تشویش کا اظہار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker