بشیر احمد میرتازہ ترینکالم

قاتل ،محافظ اور منصف۔۔۔۔۔۔۔ کون؟؟؟

bashir ahmad mirجان کی امان ۔۔۔!!! ایک ایسے حساس معاملے کو زیر بحث لا رہا ہوں جو شاہد کسی کو ناگوار اور کوئی اس پر سیخ پاء ہو سکتا ہے ،جب قانون گھر کی لونڈی بنا دی جائے اور جب انا ،خود سری اور جاہ پسندی کا سایہ انسانیت کو اوجھل کر دے تو انہونے ،خوفناک اور درندہ صفت افعال سر ذد ہونا فطری اعمال بن جاتے ہیں ،ایسا ہی ایک واقعہ گذشتہ چند روز سے اخبارات میں قارئین نے ضرور پڑھا ہوگا کہ کوٹلی کے 27سالہ نوجوان کی پُر اسرار موت معمہ بنی ہوئی ہے۔ جو اب شواہد کی روشنی ،قدموں کی چاپ اور تشدد کے آثارات سے قاتل کے کھرے تک پہنچتی دکھائی دے رہی ہے ،یہ حقیقت ہے کہ انسان کا ناحق خون کسی نہ کسی وقت طوفان کی مانند امڈ آتا ہے ، اطلاعات کے مطابق مقتول نوجوان محمد علی کو کھوئی رٹہ آذادکشمیرسے سیری جاتے ہوئے حسا%D

یہ بھی پڑھیے :

One Comment

Back to top button