پاکستان

مظفرآباد:بچوں کوتحفظ فراہم کرنیوالی این جی اوز کی آڑمیں بیرون ملک منہ مانگی قیمت پرفروخت کرنے کاانکشاف

مظفر آباد ﴿نامہ نگار﴾ دارالحکومت مظفر آباد میں بچوں اور بچیوں کو تحفظ فراہم کرنے والی این جی اوز کی آڑ میں  بچوں اور بچیوں کو بیرون ملک  منہ مانگی قیمیت پر فروخت کرنے کا انکشاف بڑے پیمانے پر نیٹ ورک متحرک  اعلیٰ شخصیت   کے ملوث ہونے کے شواہد ہیں ۔ ذرائع کے مطابق آٹھ اکتوبر 2005ئ کے زلزلے کے بعد دارالحکومت مظفر آباد میں معذور یا ایسے بچے جن کے ماں باپ زلزلے کے دوران فوت ہوگئے ان میں ایسے بچے اور بچیاں شامل تھیں جن کو مختلف این جی ا وز نے اپنے ادارے میں لے لای جن کے نام پر ان این جی اوز نے امداد اور حکومتی آشیرباد حاصل کرکے باقاعدہ ادارہ بنا ڈالا  جہاں ایسے بچوں کو تحفظ اور تعلیم و تربیت دینے شروع ہوگے جبکہ دارالحکومت مظفر آباد  میں انہی این جی اوز نے انٹرنیشنل سطح پر ان بچوں کے لیے بڑے بڑے پروگرام بھی رکھے اب ذرائع کے مطابق انکشاف ہوا ہے کہ  ایسے بچوں کو اچھی قیمت پر یو اے ای کے دیگر علاقوں میں ا ونٹ کی ریس میں استعمال کے لیے فروخت کیا جاتا ہے جہاں ان سے ایک اچھی قیمت بھی وصول کی جاتی ہے اور بعض کو مختلف ممالک کے کروڑوں اپنی فیملی جن کے ہاں اولاد نہیں ہوتی  فروخت کیاجاتا جبکہ چھوٹی بچیوں کوبھی فروخت کیا جاتا جن کا باقاعدہ  نیٹ ورک مظفر آباد میں ہے جن کے بارے میں تحقیقات شروع ہے اس انٹرنیشنل نیٹ ورک  میں کئی اعلیٰ شخصیت بھی ملوث ہیں  جو بیرون ملک جا کر ان بچوں اور بچیوں کو فروخت کرنے کے لیے گاہک  لائے جاتے ہیں  مگر ہمارے ادارے خاموش تھے  اور اب حرکت نہیں آگے بہت جلد گرفتاریوں کا سلسلہ  شروع ہوگا ۔

یہ بھی پڑھیں  لاہور میں ایوان اقبال میں لگی آگ پر قابو پالیاگی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker