تازہ ترینعلاقائی

غلام سرور خان کی مقبولیت سے خائف مسلم لیگ (ن) اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی ہے،ملک اعجاز

ٹیکسلا (نامہ نگار) سابق سیکرٹری جنرل ٹیکسلا بار ایسوسی ایشن ملک محمد اعجاز طاہر ایڈووکیٹ ہائی کورٹ نے کہا ہے کہ تحریک انصاف کے راہنما ممبر قومی اسمبلی غلام سرور خان کی مقبولیت سے خائف مسلم لیگ (ن) اوچھے ہتھکنڈوں پر اتر آئی ہے، پی ٹی آئی کے ایم این اے غلام سرور خان کی ڈگری کا معاملہ عدلیہ کے فیصلہ کے بعد کیوں اچھالا جارہا ہے ،اقدام کی پر زور مذمت کرتے ہیں،یونیورسٹی انتظامیہ کا ڈگری بابت فیصلہ بد نیتی پر مبنی ہے ،سیاسی مخالفین کو دبانے کے لئے مسلم لیگ ن مختلف حربے اختیار کر رہی ہے،اداروں میں سیاسی مداخلت بند ہونی چاہئے،اعلیٰ عدالتوں کے مفصل فیصلوں کے بعد یونیورسٹی انتظامیہ نے پنجاب حکومت کے ایما پر عجلت میں فیصلہ کیا ہے جو قابل مذمت ہے،ان خیالات کا اظہار انھوں نے میڈیا سے گفتگو کے دوران کیا ملک اعجاز طاہر ایڈووکیٹ نے کہا کہ مسلم لیگ(ن) نے اداروں کو تباہ کر کے رکھ دیا ہے،من پسند فیصلوں ،اور سیاسی مخالفین کو دبانے کے لئے اداروں کا بے جا استعمال اداروں کی تباہی کا باعث بنے گا، ایک جانب پولیس اور مختلف محکموں کو سیاسی مخالفین کے خلاف پنجاب حکومت استعمال کر رہی ہے تو دوسری جانب اداروں کے اندر بے جا مداخلت سے مسائل بڑھ رہے ہیں،انھوں نے کہا کہ الیکشن ٹربیونل، ہائی کورٹ،اور سپریم کورٹ نے غلام سرور خان کی ڈگری و ڈپلومہ کو کلئیر کر دیا ،اب اچانک یونیورسٹی انتظامیہ نے کس بنیاد پر ڈگری منسوخ کر دی ،اس سے ثابت ہوتا ہے کہ یہ فیصلہ بدنیتی پر مبنیٰ ہے اور توہین عدالت کے زمرے میں آتا ہے ہم اسطرح کی کاروائیوں کی بھرپور مذمت کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  وزیراعظم آزاد کشمیرنےغفلت برتنے پر ڈائریکٹر اطلاعات سمیت تین افسران معطل کردیئے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker