تازہ ترینعلاقائی

واہ میڈیکل کالج بہترین گریجویٹ پیدا کرنے میں مصروف ہے ،لیفٹیننٹ جنرل عمرمحمود

ٹیکسلا(ڈاکٹر سید صابر علی / نا مہ نگار)کامیاب ہونے والے گریجویٹ ڈاکٹرز اپنے پیشہ ورانہ حلف کی اصل روح کی ہمیشہ پاسداری کریں اور بنی نوع انسان کی خدمت کو اپنی اولین ذمہ داری سمجھیں۔ ان خیالات کا اظہار لیفٹیننٹ جنرل عمر محمود حیات، ہلال امتیاز (ملٹری) چیئرمین پی او ایف بورڈ جو اس تقریب کے مہمان خصوصی تھے نے واہ میڈیکل کالج کے پانچویں کانووکیشن کی واہ میڈیکل کالج کے آڈیٹوریم میں منعقدہ پُر وقار تقریب کے موقع پر کیا۔ انہوں نے واہ میڈیکل کالج کے تعلیمی ماحول کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ واہ میڈیکل کالج بہترین گریجویٹ پیدا کرنے میں مصروف ہے ۔انہوں نے کامیاب گریجویٹس کو اپنی ذمہ داریوں کا احساس دلاتے ہوئے کہاکہ قومی و بین الاقوامی سطح پر صحت کی اعلیٰ معیاری سہولیات فراہم کرنے کے لیے آپ اپنا کردار ادا کریں ۔ انہوں نے کامیاب گریجویٹ ڈاکٹرزاور فیکلٹی ممبران کو اعلیٰ تدریسی خدمات پر خصوصی مبارکباد پیش کی۔ اس موقع پر تعلیمی سال 2008-2013اور 2009-2014کے دوران کامیاب ہونے والے224سے زائد گریجویٹس میں ایم بی بی ایس کی ڈگریاں اور میڈلز تقسیم کئے گئے۔ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز لاہورکے وائس چانسلرمیجر جنرل (ر) ڈاکٹر محمد اسلم نے کانووکیشن کی صدارت کی اور کامیاب طلبا ء و طالبات میں ڈگریاں تقسیم کیں ۔کانووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یونیورسٹی آ ف ہیلتھ سائنسز جس میں واہ میڈیکل کالج بھی شامل ہے کا شمار ایشیاء کے بہترین اداروں میں ہوتا ہے۔ واہ میڈیکل کالج پاکستان کے دوسرے اداروں کے لیے مثالی حیثیت رکھتا ہے ۔ اس سے پہلے پرنسپل واہ میڈیکل کالج میجر جنرل (ر)ضیا ء اللہ خان نے کالج کی سالانہ رپورٹ پیش کی۔ پرنسپل نے بتایا کہ کالج کے بہترین نتائج اس بات کی نشاندہی کرتے ہیں کہ طلبا و طالبات کی شبانہ و روز محنت کے ساتھ ساتھ والدین اور فیکلٹی سٹاف کااخلاص بھی قابل ذکر ہے۔ پرنسپل نے کامیاب طلباء اور والدین کو مبارکباد دی اور ان کے لیے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ڈاکٹراریج احمد کو2008-2013کے سیشن کی بہترین گریجویٹ کا ایوارڈ دیا گیا جبکہ صدف بھوپال کو 2009-2014کے سیشن کی بہترین گریجویٹ قرار دیا گیا۔ ڈاکٹراریج احمد نے واہ میڈیکل کالج میں اپنے تعلیمی کیریئر کے دوران 9گولڈ میڈلز، 2سلور میڈلز اور 2کانسی کے میڈلز حاصل کیے۔ 2009-2014کے لیے بہترین گریجویٹ قرار دی جانے والی ڈاکٹر صدف بھوپال نے اپنے تعلیمی کیریئر کے دوران 24گولڈ میڈلز، 3سلوراور 2کانسی کے میڈلز حاصل کیے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!