پاکستانتازہ ترین

جنوری 2013ء : کراچی میں جرائم کے نئے ریکارڈ قائم

karachiجنوری(مانیٹرینگ سیل) دوہزار تیرہ میں کراچی میں جرائم کے نئے ریکارڈ قائم ہوئے۔ دوسو چالیس سےزائد افراد کے قتل سمیت اکتالیس لاکھ کی بینک ڈکیتیاں دوسو اسی موٹرسائیکلز اور ایک سو نوے کاریں بھی چھینی گئیں۔ کراچی میں روز بروز بگڑتی ہوئی امن و امان کی صورتحال پر اب شہریوں سمیت انتظامیہ کو بھی تشویش ہونے لگی ہے۔جنوری دوہزار تیرہ میں شہر قائد میں ہونے والی جرائم کی وارداتوں نے سابقہ ریکارڈ توڑ دیئے۔ قتل وغارت گری میں دوسو چالیس سے زائد افراد کو نشانہ بنایا گیا جن میں وزیر اطلاعات سندھ شرجیل میمن کے کزن، مصنف حکیم محمود احمد برکاتی اور ایم پی اے منظر امام جیسی معروف شخصیات بھی شامل ہیں۔ شہر بھر میں تیرہ دستی اور کریکر بموں سمیت بائیس بم حملے کرنے کی کوشش کی گئی۔شہر بھر میں دوسو اسی موٹر سائیکل اور ایک سو نوے گاڑیاں چوری اور چھینی گئیں ۔جنوری دوہزار تیرہ میں دو بینک ڈکیتیاں بھی ہوئیں۔ سال کی پہلی بینک ڈکیتی چار جنوری کو جمشیدکواٹر کے نجی بینک میں ہوئی۔ جہاں سے ڈاکو دن دیہاڑے اٹھارہ لاکھ روپے لوٹ کر فرار ہوگئے جبکہ تئیس لاکھ روپے کی دوسری بینک ڈکیتی پیر آباد کے نجی بینک میں پندرہ جنوری کو ہوئی۔ شہر میں موبائل فون چھیننے کے بھی پانچ سو تیس واقعات ہوئے۔

یہ بھی پڑھیں  گلیکسی نوٹ سیون کے ہمراہ سفر نہ کریں،پی آئی اے

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker