تازہ ترینعلاقائی

یونین کونسل پیڑہ فتحال میں کانٹے دار ون ٹو ون مقابلہ

تلہ گنگ(ساجد اعوان)یونین کونسل پیڑہ فتحال کا وارڈ نمبر 5 جو کہ خاص بھگٹال کے علاقے پر مشتمل ہے اس دفعہ ایک دلچسپ اور کانٹے دار ون ٹو ون مقابلے کا منظر پیش کر رہا ہے۔ ایک طرف جماعتِ اسلامی کے نامزد امیدوار محمد عمران اور دوسری طرف مسلم لیگ(ن) کے محمد اسلام ہیں۔ بھگٹال کی سیاسی تاریخ بتاتی ہے کہ اس خطے کے ووٹرز نے ہمیشہ سیاسی تبدیلی کو خوش �آمدید کہا ہے۔ مسلم لیگ کے امیدوارکی جیت کا زیادہ انحصار مقامی موثر افراد پر ہے کہ وہ الیکشن والے دن اپنے زیرِ اثر افراد کے ووٹ مسلم لیگ(ن) کے حق میں پول کرنے میں کتنے کامیاب رہتے ہیں۔ دوسری طرف جماعتِ اسلامی کے امیدوار محمد عمران اپوزیشن پارٹیوں اور تلہ گنگ عوامی کونسل کی حمائت حاصل کرنے کے بعد نوجوانوں میں مقبولیت کی ایک نئی مثال بن کر سامنے آئے ہیں۔نہ صرف جماعتِ اسلامی کے مرد کارکنان ایک جاندارانتخابی مہم چلا رہے ہیں بلکہ جماعتِ اسلامی کی خواتین بھی گھر گھر جا کر مذہبی بنیاد پرووٹ مانگ رہی ہیں جس پر مخالفین کے اپنے گھروں کے ووٹ تقسیم کی طرف جا رہے ہیں ۔ مسلم لیگ(ن) کے مقامی سپورٹرز کی طرف سے بلندو بانگ دعوں کے باوجود ایک عام ووٹر کی خاموشی ا س بات کا پتہ دے رہی ہے کہ ووٹر اپنا فیصلہ کر چکا ہے اور الیکشن والے دن روایتی سیاسیوں کو ہر قسم کے نتیجہ کے لیے تیار رہنا ہو گا۔ تلہ گنگ عوامی کونسل کے صدر انجینئر ثاقب رؤف آف بدھڑ نے اس حوالے اپنے ایک خصوصی بیان میں کہا ہے کہ اس دفعہ انشااللہ تلہ گنگ کے عوام کو بھگٹال سے سرپرائز ملے گا جو کہ نوجوان قیادت محمد عمران کی صورت میں ہو گا۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button