پاکستانتازہ ترین

کسی حکومت نے کسانوں کیلیے 341 ارب روپے کا پیکج نہیں رکھا،وزیراعظم پاکستان

لودھراں(نمائندہ خصوصی) وزیراعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ اگر ترقیاتی کاموں میں رکاوٹیں پیدا نہ کی جاتیں تو وہ کام مکمل ہوچکے ہوتے جو آج شروع ہورہے ہیں۔لودھراں میں کسان پیکج کا اعلان کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف کا کہنا تھا کہ کسی حکومت نے کسانوں کیلیے 341 ارب روپے کا پیکج نہیں رکھا، سب جانتے ہیں کسان پیکج میں رکاوٹیں کس نے ڈالیں، کسان خوشحال ہوگا تو پاکستان خوشحال ہوگا، کسانوں سے محبت کے دعوے کرنے والے ہمارے ہاتھ روکتے ہیں اگررکاوٹ نہ ڈالی گئی ہوتی توکسانوں کو رقم تقسیم کرنے کا عمل بھی مکمل ہوچکا ہوتا۔ انہوں نے کہا کہ کسان پیکج دے کرکسانوں پراحسان نہیں کررہے، کسانوں کے لئے بجلی مزید سستی کرنا چاہتے ہیں یہی نہیں شمسی توانائی کے ذریعے ٹیوب ویل لگانے کی منظوری دے دی ہے اور شمسی ٹیوب ویلوں کے لیے کسانوں کو قرضے بھی دیں گے۔ وزیراعظم کا کہنا تھا کہ بلدیاتی انتخابات میں لودھراں کےعوام نےووٹ دیا،اسی محبت سے میں بھی پیش آؤنگا، لودھراں مسلم لیگ (ن)کا مضبوط قلعہ ہے، کم وسائل کے باوجود کسانوں کے لیے 341 ارب روپے کا منصوبہ بنایا، کسانوں کے مسائل کے حل کے لیے مزید اقدامات کررہے ہیں، ہم عبادت سمجھ پرکسانوں کی خدمت کررہے ہیں، جھوٹ بولنا ہمارا شیوہ نہیں،صاف اور سچی بات کرتے ہیں۔اپنے خطاب میں وزیراعظم نواز شریف نے قوم کو نوید سنائی کی 2017 میں ملک سے بجلی کی قلت کا خاتمہ کردیا جائے گا اور اس پر بہت تیزی سے کام جاری ہے جس کی تکمیل کے بعد 2017 ملک میں خوشحالی کا سال ہوگا، سندھ، بلوچستان، پنجاب، خیبرپختونخوا اور آزاد کشمیر میں بجلی بھی آئے گی، پینے کا صاف پانی اور موٹروے بھی آئے گی اور لودھراں کو بھی موٹروے سے ملائیں گے جس کے بعد ترقی عروج پر ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں  جھل مگسی: آزاد امیدوارکا قتل،پی بی32 میں الیکشن ملتوی

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker