تازہ ترینفن فنکار

شاعرہ پروین شاکرکو بچھڑے 21 برس بیت گئے

کراچی(نمائندہ شوبز) خوابوں،خوشبوؤں اور نوجوانوں کی زندہ دل شاعرہ پروین شاکر کو دنیا سے بچھڑے 21 برس بیت گئے لیکن ان کی خوبصورت شاعری انہیں چاہنے والوں کے درمیان آج بھی زندہ رکھے ہوئے ہے۔نوجوانوں کی زندہ دل شاعرہ پروین شاکر 24 نومبر 1952 میں کراچی شہر میں ادبی خاندان میں آنکھ کھولی جس کی وجہ سے وہ اپنے گھر میں ہی کئی شعراء کے کلام سے روشناس ہوئیں۔ پروین شاکرکی پوری شاعری ان کے اپنے جذبات و احساسات کا اظہار ہے جو پوری ایک نسل کی نمائندگی کرتی ہے کیونکہ ان کی شاعری کا مرکزی نکتہ عورت ہے جس کے باعث ان کے کلام میں ایک نوجوان دوشیزہ کے شوخ و شنگ جذبات کا اظہارہے تو کہیں زندگی کی سختی کا اظہار بھی ملتا ہے یہی وجہ ہے کہ ان کے شاعری میں احساس کی جو شدت ہے وہ ان کی دیگر ہم عصر شاعرات کے یہاں نظر نہیں آتی۔اردو ادب کے منفردلہجے کی شاعرہ پروین شاکر26 دسمبر 1994 کو 42 سال کی عمر میں اسلام آباد میں ایک ٹریفک حادثے میں چل بسیں لیکن آج بھی ان کا کلام انہیں زندہ رکھے ہوئے ہے۔

یہ بھی پڑھیں  کرپشن کے خلاف ریکارڈ بنانے والی پارٹیاں آج کرپشن کے خلاف مہم چلا رہی ہیں،چوہدری نثار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker