پاکستانتازہ ترین

کراچی سے القاعدہ برصغیراورلشکر جھنگوی کا بڑا گینگ گرفتارکرلیا، ترجمان پاک فوج

کراچی(نمائندہ خصوصی) پاک فوج کے ترجمان لیفٹیننٹ جنرل عاصم باجوہ نے ایک بار پھراس عزم کا اظہارکیا ہے کہ شہر میں مکمل امن بحال ہونے تک جرائم پیشہ افراد کے خلاف آپریشن جاری رہے گا۔ کراچی میں میڈیا نمائندوں کو بریفنگ دیتے ہوئے ترجمان پاک فوج کا کہنا تھا کہ جب آپریشن ضرب عضب شروع کیا گیا تو اس وقت یہی چیز ہمارے ذہن میں تھی کہ دہشت گرد بھاگ کر دوسرے علاقوں میں چھپ جائیں گے اور ان کے سہولت کار بھی موجود ہوں گے، ان سب چیزوں کو مد نظر رکھتے ہوئے ستمبر 2013 میں کراچی میں آپریشن شروع کیا گیا تو اس وقت شہر کے حالات بہت ابتر تھے، ٹارگٹ کلنگ، بھتہ خوری اور اغوا برائے تاوان عروج پر تھی لیکن رینجرز نے سیکیورٹی فورسز اور حساس اداروں کے ساتھ مل کر انٹیلی جنس اطلاعات پر 7 ہزار سے زائد آپریشن کئے جس میں 12 ہزار سے زائد افراد کو حراست میں لیا گیا، رینجرز نے 6 ہزار سے زائد ملزمان کو پولیس کے حوالے کیا جب کہ 9 ہزار سے زائد مختلف قسم کے ہتھیار اور 4 لاکھ 15 ہزار سے زائد گولیاں برآمد کی گئیں۔ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا تھا کہ کراچی میں آپریشن کے باعث اب حالات قدرے بہتر ہیں، ٹارگٹ کلنگ کے واقعات میں 70 فیصد، بھتہ خوری میں 85 فیصد اور اغوا برائے تاوان میں 90 فیصد کمی واقعہ ہوئی ہے لیکن ابھی بہت کام کرنا باقی ہے اور کراچی میں امن کی بحالی تک آپریشن جاری رہے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ کراچی کی عوام کے ساتھ پاک فوج اور آرمی چیف کی کمٹمنٹ جاری رہے گی اور پاک فوج کے سربراہ خود بھی آتے رہے ہیں۔کراچی سے القاعدہ برصغیر اور لشکر جھنگوی کے 97 افراد پر مشتمل ایک بہت بڑا گینگ پکڑا ہے، گرفتار افراد کالعدم تحریک طالبان کے تعاون سے متعدد دہشت گرد کارروائیوں میں ملوث تھے اور ان میں سے 26 کی گرفتاری پر کروڑوں روپے کی انعامی رقم بھی رکھی ہوئی تھی، گرفتار ملزمان میں القاعدہ بر صغیر کا نائب امیر، لشکر جھنگوی کا نائب امیراورسہولت کاربھی شامل ہیں،

یہ بھی پڑھیں  ملک میں طویل عرصے بعد کورونا وائرس کے کیسز ہزار سے کم رپورٹ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker