پاکستانتازہ ترین

پنجاب کا سالانہ بجٹ کل پیش کیا جائے گا

لاہور(پاک نیوز)پنجاب کے آئندہ مالی سال کیلئے سولہ سو اسی ارب روپے سے زائد حجم کا بجٹ کل پنجاب اسمبلی میں پیش کیا جائے گا۔بجٹ میں تعلیم،صحت ،ترقیاتی منصوبوں،انفراسٹرکچر اور زراعت کے شعبوں کو سب سے زیادہ اہمیت دی جائے گی۔ صوبائی وزیر خزانہ عائشہ غوث پاشا پنجاب کے آئندہ مالی سال دو ہزار سولہ۔سترہ کا بجٹ پنجاب اسمبلی میں پیش کریں گی۔سولہ سو اسی ارب سے زائد کے بجٹ میں ترقیاتی منصوبوں کیلئے پانچ سو ارب روپے سے زائد رکھے جائیں گے۔بجٹ میں سالانہ ترقیاتی بجٹ کا مجموعی حجم ساڑھے500ارب سے زائد ہوگا۔توانائی کے شعبے کیلئے50ارب روپے مختص کرنے کی تجویز بجٹ میں شامل ہے،ساتھ ہی کسانوں کیلئے سو ارب روپے کے خصوصی پیکج کا منصوبہ بھی شامل ہے۔ پنجاب کے بجٹ میں شعبہ ٹرانسپورٹ کیلئے33ارب ایمرجنسی سروسز کیلئے2ارب ،ہیلتھ انشورنس کارڈ کیلئےساڑھے3ارب روپے کی رقم تجاویز شامل ہیں اس کے علاوہ چولستان ڈویلپمنٹ اتھارٹی کیلئے ایک ارب ۔انڈسٹریل اسٹیٹ کیلے ڈیڑھ ارب روپے مختص کرنے کی تجویز دی جائے گی۔اورنج لائن پر100ارب روپے سے زائد رقم خرچ کی جائے گی اور یہ رقم پنجاب کے ترقیاتی بجٹ کا حصہ ہوگی جو چین کا ایگزم بینک فراہم کرے گا ۔بجٹ میں ٹیلی کمیونیکیشن کے شعبے کو دی گئی ٹیکس استثنیٰ ختم کرنے کی تجویز بھی بجٹ میں شامل ہے۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button
error: Content is Protected!!