بین الاقوامیتازہ ترین

ڈھاکہ حملہ ، ڈاکٹر ذاکر نائیک کیخلاف تحقیقات کا آغاز

ڈھاکہ (ڈیسک نیوز)ڈھاکہ میں ریسٹورنٹ پر حملے کے بعد بھارتی سیکورٹی اداروں نے بھارتی اسکالر ڈاکٹر ذاکر نائیک کے خلاف تحقیقات کا آغاز کر دیا ، ممبئی میں ڈاکٹر ذاکر نائیک کے دفتر کے باہر احتجاجی مظاہرہ ہوا ، پولیس نے سیکورٹی بڑھا دی۔بنگلہ دیشی میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ ڈھاکہ حملے میں ملوث دو دہشتگرد ڈاکٹر ذاکر نائیک سے متاثر تھے ۔ وزیراعظم شیخ حسینہ واجد کے بیٹے نے ڈاکٹر ذاکر نائیک کی ویڈیو بھی شئیر کی جس میں انتہا پسندی کا پیغام تھا ۔ بھارتی سیکورٹی اداروں نے ڈاکٹر ذاکر نائیک کے خلاف تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے ۔ادھر بھارتی انتہا پسندو ہندو تنظیم کے کارکنوں نے ممبئی میں ڈاکٹر ذاکر نائیک کے دفتر کے باہر احتجاج کیا جس کے بعد پولیس نے علاقے کی سیکورٹی بڑھا دی ۔ ڈاکٹر ذاکر نائیک نے ان الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے بیانات اور تقریریں الگ انداز میں پیش کی گئی ہیں ۔داعش کو اینٹی اسلامک اسٹیٹ قرار دیتے ہوئے ڈاکٹر ذاکر نائیک نے کہا داعش در حقیقت مسلمانوں کے خلاف دشمنوں کی سازش ہے ۔ڈاکٹر ذاکر نائیک ان دنوں سعودی عرب میں ہیں وہ 11 جولائی کو بھارت واپس پہنچیں گے ۔ بھارتی میڈیا کے مطابق وطن واپسی پر بھارتی سیکورٹی ادارے ڈاکٹر ذاکر نائیک سے پوچھ گچھ کر سکتے ہیں

یہ بھی پڑھیں  ڈرون حملے عالمی قوانین کیخلاف ہیں، بند کئے جائیں، نواز شریف

 

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker