تازہ ترینعلاقائی

پھولنگر:پاکستانی حکومت بھارت سے پانی چوری کےمسئلے پرمجرمانہ غفلت کامظاہرہ کرتی رہی ہے۔حاجی رمضان

بھائی پھیرو(نامہ نگار) کسان بورڈ پاکستان کے سیکرٹری اطلاعات حاجی محمد رمضان نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی حکومت بھارت سے پانی چوری کے مسئلے پرمجرمانہ غفلت کامظاہرہ کرتی رہی ہے۔ بھارت سے پاکستان کاپانی روکنے پرشدیداحتجاج نہیں کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ حکو مت انڈیا کی آبی دہشت گردی سمیت قومی بقا ء کے اہم مسا ئل کوحل کرنے میں ناکام رہی۔ پاکستان کی تمام داخلی اور خارجی مسائل میں سب سے بڑ ا چیلنج آبی جا رحیت ہے جس پر سا بقہ اور موجودہ حکومت نے سنجیدہ اور جرا ت مندانہ اقدا مات نہیں کیے ۔ پانی کی کمی کی وجہ سے ملک بے آب و گیاہ صحرا میں تبدیل ہو رہا ہے ۔انڈیا نے ہمارے دریاؤں پر ساٹھ کے قریب بند باندھ کر دریاؤں کو خشک اور لہلہاتے کھیتوں کو ویران بنانے کا کام زور و شور سے شروع کر رکھاہے مگر حکمران طبقے نے لوٹ مار کے سوا کچھ نہیں کیا ۔اانہوں نے کہا کہ ہمارے ملک میں کروڑوں لوگوں کو پینے کا صاف پانی بھی مہیا نہیں ۔دوسری طرف پانی کے ذخیرہ کرنے کے لئے ڈیم بھی نہیں بنائے گئے جس کی وجہ سے ہر سال لاکھوں مکعب فٹ پانی سمندر میں ضائع ہو جاتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ راوی میں پانی کی شدید کمی ہے اس لئے راوی میں لاہور سمیت بڑے شہروں کا گندا پانی آ بی حیات کے لئے ایک خطرہ بن چکا ہے ا انہوں نے مطالبہ کیا کہ ٹیلوں پر پانی نہ پہنچنے سے ایک چوتھائی رقبہ نہری پانی سے محروم ہو چکا ہے جبکہ با اثر لوگ پانی چوری کر کے کروڑوں کسانوں کا حق مار رہے ہیں ۔

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button