شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / بھائی پھیرو:دہشت گردی کے ماحول میں سیاحت اورکھیلوں کی سرگرمیوں سے نوجوان منفی سرگرمیوں سے بچ سکتے ہیں ۔مقررین

بھائی پھیرو:دہشت گردی کے ماحول میں سیاحت اورکھیلوں کی سرگرمیوں سے نوجوان منفی سرگرمیوں سے بچ سکتے ہیں ۔مقررین

بھائی پھیرو(نامہ نگار)ہیڈ بلوکی پر دریائے راوی میں عالمی ٹورزم ڈے کے حوالے سے منعقدہ تقریب میں موٹر بوٹ کشتیوں کے منفرد فلیگ مارچ نے سما ں باندھ دیا ۔دہشت گردی کے ماحول میں سیاحت اور کھیلوں کی سرگرمیوں سے نوجوان منفی سرگرمیوں سے بچ سکتے ہیں ۔سیاحت کوصنعت کا درجہ دیکر سیاحوں کو سہولتیں فراہم کی جائیں توپاکستان سیاحوں کی جنت بن سکتا ہے۔دریاؤں اور بڑی نہروں کو واٹر ویز کا درجہ دیکر ایک طرف ہم ٹرانسپورٹ میں اربوں روپے بچا سکتے ہیں تو دوسری طرف سیاحت کو فروغ دیکر کثیر زر مبادلہ کما سکتے ہیں۔تقریب سے مقررین کا خطاب۔ تفصیلات کے مطابق عالمی ٹورزم ڈے کے حوالے سے ہیڈ بلوکی پرمرینہ بوٹ کلب کے چیف ایگزیکٹو ہمایوں اختر کی طرف سے دریائے راوی پر ایک پر وقار تقریب کا اہتمام کیا گیا جس میں صحافیوں اور معززین علاقہ کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ مرینہ بوٹ کلب کے چیف ایگزیکٹو ہمایوں اختر،کسان بورڈ پاکستان کے مرکزی سیکرٹری اطلاعات حاجی محمد رمضان،پاک نیوی کے کمانڈر عارف،پنجاب ٹورزم کے آفیسر مشتاق احمد ،ریسکیو 1122 ننکانہ کے انچارج امیر علی ،ڈاکٹر سیف اللہ ، اور دیگرمقررین نے کہا کہ پاکستان بڑی قربانیوں کے بعد حاصل کیا گیا ہے اس کی حفاظت کے لئے پوری قوم کو متحد ہو کر کام کرنا چاہیے ۔ نوجوانوں میں کھیلوں اور سیاحت کے فروغ سے نئی نسل کو منفی سرگرمیوں سے دور رکھا جا سکتا ہے ۔ دہشت گردی کے ماحول میں سیاحت اور کھیلوں کی سرگرمیوں سے نوجوان منفی سرگرمیوں سے بچ سکتے ہیں ۔سیاحت کوصنعت کا درجہ دیکر سیاحوں کو سہولتیں فراہم کی جائیں توپاکستان سیاحوں کی جنت بن سکتا ہے۔دریاؤں اور بڑی نہروں کو واٹر ویز کا درجہ دیکر ایک طرف ہم ٹرانسپورٹ میں اربوں روپے بچا سکتے ہیں تو دوسری طرف سیاحت کو فروغ دیکر کثیر زر مبادلہ کما سکتے ہیں پاکستان میں پانی کی کھیلوں کے فروغ کے لئے مرینہ بورڈ کلب نے بڑی محنت سے کام کیا ہے ۔ تقریب میں ریسکیو1122 ننکانہ ، بھائی پھیرو ، اُوکاڑہ نے بھی حصہ لیا ۔ جبکہ اس میں پاک نیوی فوج کی ٹیم نے بھی حصہ لیا ۔ تقریب کے موقع پر مہمان خصوصی کو درجنوں موٹر بوٹ کے ایک دستہ نے فلیگ مارچ کر کے سلامی پیش کی دریائے راوی میں درجنوں کشتیاں جب فلیگ مارچ کرتے ہوئے قومی جھنڈے لہراتے جب پنڈا ل کے سامنے سے گزریں تو ناظرین نے نعرہ تکبیر اللہ اکبر اور پاکستان کا مطلب کیا ’’ لا الہ الااللہ ‘‘کے فلک شگاف نعرے لگائے ۔ پاکستان بھر میں عالمی یوم ٹورزم کے حوالے سے منعقدہ تقریب میں کشتیوں کے فلیگ مارچ کی یہ پہلی اور منفرد تقریب تھی جسے مہمان خصوصی نے زبردست تحسین پیش کیا ۔ تقریب میں بھائی پھیرو پریس کلب کے میاں خالد رفیق ،گلزار ملک ،سید بابر مشہدی ،نعیم سلطان ،ظہور احمد ساجد اور دیگر صحافی موجود تھے۔

یہ بھی پڑھیں  ۔،۔ تاریخی کردار کی ماہیت ۔،۔