تازہ ترینفن فنکار

لاہور ہائی کورٹ نے چیئرمین پیمرا ابصار عالم کی تعیناتی کالعدم قرار دے دی

لاہور(نمائندہ خصوصی) لاہور ہائی کورٹ نے چیئرمین پیمرا ابصار عالم کی تعیناتی کالعدم قرار دےدیا ہے،ہائی کورٹ کے مطابق چیئرمین پیمرا کو میرٹ سے ہٹ کر تعینات کیا گیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں شہری منیر احمد نے ایڈووکیٹ اظہر صدیق کی وساطت سے درخواست دائر کی تھی، درخواست گزار کا موقف تھا کہ ابصار عالم کو چیئرمین پیمرا تعینات کرنے کے لیے دو مرتبہ اخبار اشتہار جاری کیے گئے۔پہلے اشتہار کے مطابق ابصار عالم چیئرمین پیمرا کے عہدے کے لیے تعلیمی معیار پر پورا نہیں اترتے تھے، ابصار عالم کو تعینات کرنے کے لیے دوبارہ کم تعلیمی قابلیت کا اشتہار جاری کیا گیا۔فریقین کے دلائل سننے کے بعد جسٹس شاہد کریم نے چند روز قبل کیس کا فیصلیمحفوظ کیا تھا، جسے آج سناتے ہوئے قرار دیا کہ چیئرمین پیمرا کو میرٹ سے ہٹ کر تعینات کیا گیا، چیئرمین پیمرا کی تعیناتی شفاف طریقے سے نہیں ہوئی ہے۔فیصلے میں کہا گیا کہ چیئرمین کی تعیناتی سپریم کورٹ کے فیصلوں کی بھی خلاف ورزی ہے۔ حکومت فوری طور پر میرٹ اور قوانین کے مطابق نئی تعیناتی کرے۔سینئر صحافی ابصار عالم کو 22 اکتوبر 2015 کو چیئرمین پیمرا کے عہدے پر تعینات کیا گیا تھا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button