تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو:سخت سردی میں مچھلی فروشوں،ٹکا ٹک اورڈرائی فروٹ کی دوکانوں پررش۔دوکانداروں کی موجیں

بھائی پھیرو(نامہ نگار) سخت سردی میں مچھلی فروشوں،ٹکا ٹک اور ڈرائی فروٹ کی دوکانوں پر رش۔منہ مانگے دام مانگنے والے دوکانداروں کی موجیں۔باسی مچھلی اور ناقص گوشت کے منہ مانگے دام لیکر لوگوں میں بیماریاں بانٹنے لگے۔ ۔تفصیلات کے مطابق شدید سردی کا موسم غریبوں کیلیے عذاب سے کم نہیں،نہ انکے پاس پہننے کیلیے گرم کپڑے ہیں اور نہ انکے پاس بھوک مٹانے کیلیے وسائل, بجلی اور گیس کی لوڈشیڈنگ کی وجہ سے فیکٹریاں بند ہو جانے سے ہزاروں مزدور بے روزگارہوکر فاقہ کشی کا شکار ہیں۔ دھند اور سردی کی وجہ سے محنت مزدوری کرکے پیٹ پالنے کے ذرائع بھی محدود ہو چکے ہیں۔دوسری طرف سخت سردی امیر آدمیوں اور صاحب وسائل اشخاص کیلیے طرح طرح کے ،،کھابوں ،، کا شوق پورا کرنے کا ذریعہ بن چکی ہیں۔امیر آدمیوں کی وجہ سے یہاں مچھلی فروشوں،ڈرائی فروٹ بنانے والوں اور بار بی کیو اور ہوٹلوں کا کاروبار کرنے والوں کا کام خوب چمک رہا ہے۔رش کی وجہ سے ان دوکانوں پر امیر آدمیوں کا بے پناہ رش ہو جاتا ہے جس کی وجہ سے یہ تاجر منہ مانگے دام وصول کرکے اپنی تجوریاں بھر رہے ہیں۔ہیڈ بلوکی پر مچھلی فرائی کرنے والوں کی دوکانوں پر دور درازسے کاروں والے دریائے راوی کی مچھلی کھانے آتے ہیں مگر یہ دوکاندار انہیں سمندر کی مچھلی لاہور مارکیٹ سے خرید کر دریائے راوی کی کہہ کر کھلا دیتے ہیں۔بعض اوقات یہ مچھلی کئی کئی روز کی باسی اور مضر صحت ہوتی ہے مگر یہ مچھلی فروش اس بوسیدہ اور مضر صحت مچھلی پر تیز اور خوشبودار مصالحے لگا کر اسے خوش ذائقہ بنا کر دھوکہ دیتے ہیں۔ڈرائی فروٹ بیچنے والے بھی مرضی کے ریٹ لگاکر اپنی جیبیں بھرتے ہیں۔بار بی کیو کی دوکانوں پر بھی ناقص،پانی ملا اور مردار گوشت فروخت کرکے عوام کی صحت سے کھیلا جاتا ہے ۔عوامی سماجی حلقوں نے مطالبہ کیا ہے کہ یہاں مضر صحت اشیا مہنگے داموں بیچنے والوں کے خلاف سخت کاروائی کی جائے۔

یہ بھی پڑھیں  مشرف کو گارڈ آف آنردینے والے ڈرامہ بازی کررہے ہیں، چوہدری نثار

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker