شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / پھولنگر:رمضان بازاروں کےکروڑوں روپےحکمران پارٹی کی ذاتی تشہیرکیلیےاستعمال کیےجارہے ہیں،حاجی رمضان

پھولنگر:رمضان بازاروں کےکروڑوں روپےحکمران پارٹی کی ذاتی تشہیرکیلیےاستعمال کیےجارہے ہیں،حاجی رمضان

بھائی پھیرو(نامہ نگار) ضلع قصور میں حکمران پارٹی نے رمضان بازاروں،گندم پرچیز سنٹروں اور بلدیاتی اداروں کے ذریعے اپنے امیدواروں کی ذاتی تشہیر کے لیے استعمال کرکے پری پول رگنگ کی انتہا کر رکھی ہے۔انتظامیہ حکمرانوں کی غلام بن کر عوام کو حکمرانوں کے ڈیروں پر سجدہ ریزی پر مجبور کرکے انہیں پی ایم ایل این کو ووٹ دینے پر مجبور کر رہی ہے ۔الیکشن کمیشن اورسپریم کورٹ نوٹس لے۔ان خیالات کا اظہارجماعت اسلامی حلقہ این اے 140کے امیدواراور متحدہ مجلس عمل ضلع قصور کے ڈپٹی سیکرٹری حاجی محمد رمضان نے صحافیوں سے گفتگو کرتے کیا۔انہوں نے کہا کہ رمضان بازاروں کے کروڑوں روپے حکمران پارٹی کی ذاتی تشہیر کیلیے استعمال کیے جا رہے ہیں۔حکومتی فنڈ سے جگہ جگہ حکمران پارٹی کے امیدواروں کے بڑے بڑے فلیکس اور ہورڈنگ لگا کر اسے انتخابی مہم بنا دیا گیا ہے۔رمضان بازاروں سے سستی اشیا صرف حکمران پارٹی کے سپورٹروں کو دیجا رہی ہیں جبکہ مستحق غریب سارا دن دھکے کھا کر مایوس لوٹ جاتے ہیں۔خزانے کے اربوں روپے سے کچھ کرپٹ بیوروکریسی کھا جائے گی اور باقی حکمران پارٹی کی انتخابی مہم پرلگا دیے جائیں گے جبکہ رمضان بازار وں سے عوام کو کوئی ریلیف نہیں مل سکے گا۔۔بلدیاتی اداروں کے سارے وسائل بھی حکمران پارٹی نے اپنی انتخابی مہم پر لگا رکھے ہیں۔ترقیاتی کاموں کی آڑ میں لوگوں کو رشوت دیکر ووٹ خریدنے کا عمل جاری ہے۔حکمران پارٹی کے جلسوں پر روپیہ پانی کی طرح بہایا جا رہاہے اور جہاں بھی جلسہ ہوتا ہے وہاں بلدیاتی اداروں کے ملازم ہورڈنگ لگاتے ہیں جبکہ بڑے بڑے فلیکس اور ہورڈنگ لگا کر اس پر امیدواروں اور انکے سپورٹروں کی تصاویر لگا کر اس سے انٹخابی مہم چلائی جا رہی ہے۔بلدیاتی اداروں اور ترقیاتی فنڈوں سے اربوں روپے نکلوا کر اپنی انٹخابی مہم چلائی جا رہی ھے۔گندم پرچیزسنٹروں سے باردانہ کا زیادہ تر حصہ بھی حکمران پارٹی کے ممبران خود لے گئے اور باقی اپنے چہیتے ورکروں ،آ ڑھتیوں اور مڈل مینوں کو دے دیے گئے۔عام کسان اپنی گندم کھلی منڈی میں گیارہ سو روپے من بیچنے پر مجبورہے۔انہوں نے کہا کہ سرکاری خزانے کے اربوں روپے اپنی انتخابی مہم پر لگا کر حکمران پارٹی پری پول رگنگ کر رہی ہے۔سرکاری خزانے کو اپنی ذاتی تشہیر پر لگا کر اور ترقیاتی کاموں کی آڑ میں عوام سے ووٹ خرید کر انتخابی ضابطہ اخلاق کی دھجیاں بکھیری جا رہی ہیں۔ضلع قصور کی انتظامیہ حکمران پارٹی کی غلام بن کر لوگوں پر جھوٹے مقدمات بنوا کر، قبضے کرواکر ،اور انکے خلاف جھوٹی درخواستیں دلوا کر مظلوم لوگوں کو حکمران پارٹی کے ڈیروں پر سجدہ ریزی پر مجبور کرکے انکے ووٹ بڑھانے میں مصروف ہے۔انہوں نے الیکشن کمیشن آف پاکستان اور چیف جسٹس پاکستان سپریم کورٹ سے مطالبہ کیا کہ وہ پری پول رگنگ کو فوری طور پر روکے۔رمضان بازاروں،گندم پرچیز سنٹروں اور بلدیاتی اداروں پر لگائے جانے والے اربوں روپے کا آڈٹ کروائے اور سرکاری وسائیل کے بے دریغ استعمال اور خرد برد کی تحقیقات نیب سے کروائے

یہ بھی پڑھیں  مشرف کے فارم ہاؤس کو سب جیل قرار دینے کیخلاف درخواست مسترد