شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / عام انتخابات 2018 پر20 ارب روپے سے زائد لاگت آئے گی۔ الیکشن کمیشن

عام انتخابات 2018 پر20 ارب روپے سے زائد لاگت آئے گی۔ الیکشن کمیشن

اسلام آباد(بیوروچیف) الیکشن کمیشن نے عام انتخابات 2018 پر اخراجات کا ابتدائی تخمینہ لگالیا، 20 ارب روپے سے زائد لاگت آئے گی۔ الیکشن کمیشن ذرائع کے مطابق عام انتخابات میں 20 ارب روپے سے زائد لاگت آنے کا امکان ہے جس میں بیلٹ پیپرز، سیکیورٹی، انتخابی عملے کا معاوضہ، پولنگ مٹیریل، ٹرانسپورٹیشن اور دیگر اخراجات شامل ہیں۔نجی ٹی وی رپورٹ کےمطابق ذرائع الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ بیلٹ پیپرز کے کاغذ اور چھپائی پر ڈھائی ارب سے زائد اخراجات کا تخمینہ ہے جب کہ بیلٹ پیپرز کی چھپائی پر بھی ایک ارب سے زائد اخراجات کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔ذرائع الیکشن کمیشن کے مطابق عام انتخابات میں سیکیورٹی کے لیے ایک ارب اور پولنگ مٹیریل پر ایک ارب سے زائد اخراجات آنے کا امکان ہے۔ الیکشن کمیشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ انتخابی عملے کو معاوضے کی مد میں 6 سے 7 ارب کے اخراجات کا تخمینہ ہے جب کہ ٹرانسپورٹیشن کی مد میں ایک ارب سے زائد اخراجات کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔ذرائع الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ وزارت خزانہ انتخابی اخراجات کے بروقت فنڈز فراہم کر رہا ہے۔یاد رہے کہ الیکشن کمیشن کی جانب سے عام انتخابات کے لیے مجوزہ تاریخوں کے لیے سمری صدر مملکت ممنون حسین کو پہلے ہی ارسال کی جاچکی ہے جس میں 25، 26 یا 27 جولائی کو پولنگ کرائے جانے کی تجویز دی گئی ہے۔عام انتخابات میں سیکیورٹی کے لیے ایک ارب اور پولنگ مٹیریل پر ایک ارب سے زائد اخراجات آنے کا امکان ہے۔ الیکشن کمیشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ انتخابی عملے کو معاوضے کی مد میں 6 سے 7 ارب کے اخراجات کا تخمینہ ہے جب کہ ٹرانسپورٹیشن کی مد میں ایک ارب سے زائد اخراجات کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔ذرائع الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ وزارت خزانہ انتخابی اخراجات کے بروقت فنڈز فراہم کر رہا ہے۔

error: Content is Protected!!