تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو سٹی اور گردونواح میں ڈاکو اور چور راج

بھائی پھیرو(نامہ نگار)بھائی پھیرو سٹی اور گردونواح میں ڈاکو اور چور راج۔دن دیہاڑے روڈڈکیتی اور چوری کی سات وارداتوں میں مسلح ڈاکووں نے شہریوں کو تشدد کا نشانہ بنا کرلاکھوں روپے نقدی،زیورات،موٹر سائکلیں،منی ڈالا اور قیمتی سامان سے محروم کر دیا،خواتین سے پرس چھین لیے اور موٹر سائکل اور منی ٹرک بھی لے اڑے ۔پولیس مقدمات درج نہ کرکے چوروں اور ڈاکووں کی طرفدار بن گئی۔ شہری عدم تحفظ کا شکارہوکر سراپا احتجاج ،اعلی حکام سے تحفظ فراہم کرنے اور ڈکیتی کے مقدات درج کرانے کی اپیل۔تفصیلات کے مطابق روڈ ڈکیٹی کی پہلی واردات میں تھانہ سٹی کے کوٹ جوئیانوالہ کے قریب ہوئی جہاں پر نواحی پٹرول پمپ کا مالک حافظ یحی داؤد اپنی کار پر اپنے پمپ سے دس لاکھ روپے کیش لیکر بھائی پھیرو بینک میں جمع کرانے آرہا تھا کہ جب وہ کوٹ جوئیانوالہ کے قریب پہنچا پیچھے سے آنے والے ہونڈا125 نمبر LER 3446 پر سوار دو مسلح نامعلوم ڈاکووں نے کار پر اندھا دھند فائرنگ شروع کر دی جس سے کار چھلنی چھلنی ہوگئی ۔ڈرائیور جرات سے کار نزدیکی آبادی لے گیا ۔شہریوں کے آجانے پر ڈاکو فائرنگ کرتے فرارہوگئے ۔چند روز قبل بھی اسی مدعی کے ساتھ ڈکیتی ہوئی تھی جس میں ڈاکو ہزاروں روپے لوٹ لے گئے تھے ڈونوں مقدمات درج ہونے کے باوجود سٹی پولیس ڈکیتیوں کا سراغ نہیں لگا سکی۔ڈکیتی کی دوسری واردات میں ایک موبائیل کمپنی کا سیلز مین نوید علی ریکوری کرکے رقم جمع کروانے اپنی موٹر سائکل پر بھائی پھیرو آرہا تھا کہ جب وہ پل پرناواں کے قریب پہنچا تو پیچھے سے آنے والے ہونڈا 125 نمبر 9799پر سوارتین مسلح نامعلوم ڈاکووں نے دن دیہاڑے اسے روکا اور گن پوائینٹ پر 195200 روپے نقدی اور تین موبائیل مالیتی بائیس ہزار رپے گن پوائینٹ پر چھین لیے اور فرار ہوگئے ۔واقع کی فوری اطلاع کے باوجود سٹی پولیس کافی دیر کے بعد آئی اور اطلاع کے باوجود دو دن بعد مقدمہ درج کرکے آرام کرنے لگی۔روڈ ڈکیتی کی تیسری واردات میں نواحی گاؤں گھمن کے میں بھٹہ مالک رانا جبار کے گھر سے درجنوں ڈاکو سترہ لاکھ روپے نقدی اور سو تولے زیورات لوٹ کر فرار ہوگئے۔ڈکیتی کی چوتھی واردار میں بارہ مسلح نا معلوم ڈاکو گزشتہ رات محلہ صابری میں یونس کے گھر گھس آئے اور اہل خانہ کو تشدد کا نشانہ بنا کر ایک کمرے میں بند کرکے گھر کی تلاشی لیکرلاکھوں روپے نقدی ،زیورات اور قیمتی سامان لوٹ کر لے گئے۔اطلاع کے باوجود ابھی تک مقدمہ درج نہیں کیا گیا۔چوری کی پانچویں واردات محمد اکرم نامی تاجر کے ساتھ ہوئی ۔تاجر اپنی موٹر سائکل کھڑی کرکے دوائی لینے گیا تو نامعلوم چور اسکی موٹر سائکل نمبر LEO 1835 چوری کرکے لے گئے۔درخواست کے باجود سٹی پولیس نے مقدمہ درج نہیں کیا ۔چوری کی چھٹی واردات میں نامعلوم چور درس بابا شیر بہادر کے رہائشی محمد ارشد کے ساتھ ہوئی جو اپنا منی ٹرک نمبر LED 7371 کھڑا کرکے بکرے خریدنے گیا تو پیچھے سے نامعلوم چور اسکا چھ لاکھ روپے مالیت کا ڈالا چرا لے گئے ۔روڈڈکیتی کی ساتویں واردات نواحی گاؤں بہڑوال کا زرگر عبدالقدیر کا بھائی جہانگیر پندرہ تولے سونا لیکر پتوکی سے زیورات بنا نے جا رہا تھا کہ دو نامعلوم ڈاکووں نے اس سے لاکھوں روپے کا سونا چھین لیا۔ دن دیہاڑے روڈ ڈکیتی کی پے در پے وارداتوں سے علاقے میں خوف و ہراس پھیل چکا ہے اور لوگ گھروں میں محبوس ہو کر بیٹھ جاتے ہیں۔سٹی پولیس بھائی پھیرو مظلوموں کے مقدمات درج نہ کرکے چوروں اور ڈاکووں کی حمایتی بن چکی ہے ۔عوامی سماجی حلقوں تنویر چوہدری اور انجمن تاجراں کے محمد منشانے اعلی حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ ڈاکوؤں کو گرفتار کر کے عوام کو تحفظ فراہم کیا جائے اور نا اہل سٹی پولیس کے خلاف سخت کاروائی کی جائے۔ان رہنماؤں نے دھمکی دی کہ اگر عوام کی داد رسی نہ کی گئی تو ہم سڑکوں پر آکر احتجاج کرنے پر مجبور ہونگے اور حالات کی ذمہ داری اعلی پولیس حکام پر ہوگی

یہ بھی پڑھیں  شارجہ ٹیسٹ: پاکستان کا ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker