شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / پھولنگر:سوئی گیس کے ملازمین نے جعلی سوئی گیس کنکشن لگا لگا کر تجوریاں بھر لیں

پھولنگر:سوئی گیس کے ملازمین نے جعلی سوئی گیس کنکشن لگا لگا کر تجوریاں بھر لیں

بھائی پھیرو(نامہ نگار)بھائی پھیرو۔سیوریج کا گندہ پانی سوئی گیس کے پائپوں میں داخل ہونے سے سینکڑوں لوگوں کو گیس کی سپلائی بند۔چولھے ٹھنڈے ۔ محکمہ سوئی گیس کے ملازمین نے جعلی سوئی گیس کنکشنوں کی بھر مار کر کے اور گیس چوری کرکے تجوریاں بھر لیں ۔محکمہ کو کروڑوں کا نقصان ۔محکمہ نے اپنی کرپشن چھپانے کیلیے لوگوں کو ہزاروں روپے کے بھاری بل بھیج دیے ،غریبوں کی چیخیں نکل گئیں ۔ تفصیلات کے مطابق بھائی گزشتہ روز بھائی پھیرو میں سیوریج کا گندہ پانی سوئی گیس کے پائپوں میں داخل ہونے سے سینکڑوں لوگوں کو گیس کی سپلائی بندہوگئی جبکہ گیس کے پائپوں کے ذریعے گندہ پانی لوگوں کے باورچی خانوں میں داخل ہو جانے سے گھروں میں بدبو اور جراثیموں نے ڈیرے ڈال لیے۔کھانے پینے کی اشیا بھی جراثیم اور زہر آلود گندے پانی سے خراب ہوگئیں جبکہ عوام طرح طرحکی بیماریوں میں مبتلا ہونے لگے۔گیس نہ آنے سے لوگوں کے چولھے ٹھنڈے پڑے ہیں اور لوگوں کو کھانا پکانے میں شدید مشکلات کا سامنا ہے ۔گیس جلانے کی عادی خواتین کو اب لکڑیاں جلا کر کھانا پکانے کا ہنر بھول چکا ہے ۔کئی گھروں میں لکڑیاں جلانے کا کہنے پر بیویوں اور خاوندوں میں لڑائی جھگڑے روز کامعمول بن چکے ہیں ۔محلہ اسلام پورہ میں ایک شخص شاہین نے جب اپنی بیوی کو لکڑیاں جلاکر کھاناپکانے کا کہا تو اسکی بیوی نے انکار کردیا جس پر اس نے اپنی بیوی کی پٹائی کردی جس سے اسکی بیوی روٹھ کر میکے چلی گئی ۔اب بیچارہ خاوند اپنے بچوں کیلیے بازار سے ہوٹلوں سے کھانا لا کر کھلانے پر مجبور ہے۔ دوسری طرف جعلی سوئی گیس کے میٹر لگاکر محکمہ کو کروڑوں کا نقصان پہنچانے والے،، گیس مافیا ،، نے اپنی کرپشن چھپانے کیلیے ان علاقوں کے گیس کے صارفین کو ہزاروں روپے کے بھاری بل بھیج کر عوام کی چیخیں نکال دیں ہیں۔جن لوگوں کو پہلے دو یا تین سو روپے ماہانہ بل ملتا تھا اب انہیں بیس بیس تیس تیس ہزار روپے کے بھاری بل بھیج دیے ہیں ۔انجمن تاجراں کے ملک محمد عثماں اور دیگر نے کہا ہے کہ چند روز قبل شہریوں کے جعلی ڈیمانڈ نوٹسوں پر جعلی کنکشن لگانے میں با اثر ملزمان اور سوئی گیس کے ملازمین ملوث ہیں جو سادہ لوح شہریوں سے ہزاروں روپے رشوت لیکر جعلی کنکشن لگاتے ہیں۔سماجی رہنما طارق شاہین نے مطالبہ کیا ہے کہ گیس پائپوں میں گندہ پانی آنے کی تحقیقات کرا کر سوئی گیس کی سپلائی جلد بحال کی جائے وگرنہ سینکڑوں لوگ سوئی گیس کے دفاتر کے باہر دھرنا دیں گے ۔

یہ بھی پڑھیں  پہلے وکی لیکس اب پاناما لیکس