پاکستانتازہ ترین

ینگ ڈاکٹرز کی تیسرے روز بھی ہڑتال جاری، مریض ذلیل و خوار

لاہور(پاک نیوز) پنجاب بھر کے ینگ ڈاکٹرز نے ا ایم ٹی آئی ایکٹ کو ماننے سےانکار کردیا ہے اور لاہور سمیت پنجاب بھر کے سرکاری اسپتالوں کے آؤٹ ڈور میں تیسرے روز بھی کام بند کررکھا ہے، جس کے باعث مریض رُل گئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق میو، جناح،سروسزاورجنرل اسپتال سمیت دیگر ٹیچنگ اسپتالوں میں ینگ ڈاکٹرز کی ہڑتال کے باعث او پی ڈی میں کام بند ہوگیا ہے۔ینگ ڈاکٹرز کا موقف ہے کہ ایم ٹی آئی ایکٹ کے نفاذ سے ڈاکٹرز کی نوکریاں داؤ پر ہوں گی، یہ کالا قانون ہے،جسے کسی صورت تسلیم نہیں کریں گے۔احتجاجی ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ ایم ٹی آئی سرکاری اسپتالوں کو نجکاری کی جانب لے جانے کا دوسرا نام ہے، ڈاکٹرز کی ہڑتال کے باعث او پی ڈی میں آنے والے مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ دوسری جانب وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد نے ینگ ڈاکٹرز کی ہڑتال کا مقصد سیاست چمکانا قرار دے دیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں  ڈیرہ غازیخان:اقبال فرید نے بحیثیت ٹی ایم اوچارج سنبھال لیا

یہ بھی پڑھیے :

Back to top button

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker