شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / پتوکی: ڈھولن چک 27کے طالب علم اشراق عرف بوبی کا قاتل گرفتار

پتوکی: ڈھولن چک 27کے طالب علم اشراق عرف بوبی کا قاتل گرفتار

پتوکی (تحصیل رپورٹر)تھانہ صدر پتوکی کے علاقہ ڈھولن چک 27میں چھٹی کلاس کے طالب علم اشراق عرف بوبی کو اغواء اور زیادتی کے بعد قتل کرنے والے درندہ صفت ملزم فرحان کو ایک سال چار ماہ دو دن بعد ڈی این اے میچ کرنے کے بعد گرفتار کرلیا گیا۔دوسرا ساتھی سابقہ ایس ایچ او کی غفلت سے بیرون ملک فرار۔ڈی پی او قصور نے غفلت برتنے پر سابقہ ایس ایچ او طاہر خاں کو معطل کر دیا۔،تفصیلات کے مطابق ڈھولن چک 27 کی رہائشی سلماں بی بی زوجہ منور حسین نے تھانہ صدر پتوکی میں مقدمہ درج کروایا کہ میرا بیٹا مسمی اشراق احمد عرف بوبی جو کہ چھٹی کلاس کا طالب علم ہے گورنمنٹ ہائی سکول ڈھولن چک 27میں زیر تعلیم ہے مورخہ09.01.18بروز منگل بوقت شام 06:00بجے کے بعد گھر سے نکلا ہے جو واپس نہ آیا ہے جس کو دو افراد نے اغواء کر لیا ہے جس پر تھانہ صدر پتوکی پولیس نے نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرکے مغوی بچے کی تلاش شروع کردی۔دوران تلاش مغوی اشراق احمد عرف بوبی بعمر 12/13سال کی نعش گاوں کے قریب فصل کماد سے ملی جس کا حسب ضابطہ پوسٹ مارٹم کروایا گیاپوسٹ مارٹم رپورٹ میں بچے کے ساتھ بدفعلی ہو نا پائی گئی تاہم ملزمان کا کوئی سراغ نہ مل سکا۔ تھانہ صدر پولیس کے ایس ایچ او محمود الحسن نے اپنی ٹیم کے ہمراہ پیشہ وارانہ صلاحیتوں کے ساتھ ملزمان کو گرفتار کرنے کیلئے محنت کی۔تمام کا مقصد سفاک ملزم کو ٹریس کر کے گرفتار کرنا تھا،ان کوششوں میں جیو فینسنگ،ڈکوئے آپریشنز،گھر گھر کی چیکنگ،سابقہ ریکارڈ یافتہ ملزمان،جیل سے رہا شدہ ملزمان،مزدور اڈاجات کی نگرانی او رڈی این اے ٹیسٹ جیسے تمام اقدامات کیے گئیدوران تفتیش 500سے زائد افراد کو شامل تفتیش کیا گیا جن میں سے 110افراد کا DNAٹیسٹ کروایا گیا اور8کس افراد کا پولی گراف ٹیسٹ کروایا گیا، اور اس دوران صدر پولیس پتوکی کو ملزم کا سراغ ملا اورملزم فرحان احمد ولد محمد خالد قوم آرائیں کا DNAمیچ کر گیا ہے،دوران انٹیروگیشن ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف بھی کرلیا ہے جس کی تصدیق بذریعہ ڈی این اے اور دیگر شواہد سے ہوچکی ہے،جس کی مزید انٹیروگیشن جاری ہے۔ڈی پی اوقصور عبدالغفار قیصرانی نے اچھی کارکردگی پر ایس ایچ او تھانہ صدر پتوکی انسپکٹر محمودالحسن اور انکی ٹیموں کو شاباش دیتے ہوئے نقداور تعریفی سرٹیفکیٹ دینے کا اعلان کیا ہے۔جب کہ ڈی پی او قصور نے فرائض سے غفلت برتنے اور گرفتار کر کے دوسرے ملزم کو چھوڑنے پر سابقہ ایس ایچ او طاہر خاں کو معطل کر دیا ہے۔مقتول اشراق عرف بوبی کی والدہ سلمیٰ بی بی نے صحافیوں کو بتایا کہ دونوں قاتل میرے ساتھ میرے بیٹے کو ڈھونڈتے رہے ہیں۔میں حکومت سے انصاف کی اپیل کرتی ہوں اور مطالبہ کرتی ہوں کی قاتلوں کو عبرت ناک سزاد ی جائے۔

یہ بھی پڑھیں  لاہور:پاکستان فیڈرل یونین آف کالمسٹ کے زیراہتمام ٹریننگ 5مئی کوہوگی