شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / مصطفی آباد:کھارا میں تجاوزات کے خلاف آپریشن چند افراد تک محدود

مصطفی آباد:کھارا میں تجاوزات کے خلاف آپریشن چند افراد تک محدود

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار) کھارا میں تجاوزات کے خلاف آپریشن چند افراد تک مخصوص، نائب تحصیلدار اقبال رشید میو، پٹواری جاوید انصاری نے مبینہ ملی بھگت کے خلاف ہر پلیٹ فارم پر جائیں گے، متاثرین کا اعلان، عرصہ داراز سے سرکاری سکول پر قابضین کے خلاف کاروائی نہ ہو سکی، غریب افراد سے دو ایکڑ اراضی واگزار کروالی جبکہ ضلعی انتظامیہ با اثر افراد سے تین ایکڑ اراضی واگزار کروانے سے قاصر،تفصیلات کے مطابق مصطفی آباد کے نواحی گاؤں کھارا میں زمین واگزار کروانے کیلئے شروع کئے گئے آپریشن نے ضلعی انتظامیہ کی ملی بھگت کا منصوبہ بے نقاب کر دیا، کھارا کے نمبردار کی طرف سے سرکاری زمین واگزار کروانے کیلئے ڈپٹی کمشنر کو درخواست دی گئی جس پر ڈپٹی کمشنر قصور نے لوکل گورنمنٹ ضلع کونسل اورمحکمہ ریونیو کو پانچ ایکڑ اراضی واگزار کروانے کے احکامات جاری کئے، نائب تحصیلدار اقبال رشید میو، پٹواری جاوید انصاری نے مبینہ ملی بھگت کرکے غریب افراد سے دو ایکڑ زمین واگزار کروالی جبکہ تین ایکڑ زمین جس پر با اثر افراد قابض تھے کی نشاندہی ہی نہیں کی، دس لاکھ روپے مالیت سے زائد کے زندہ بٹیروں والے فارم پر بھی پٹواری جاوید انصاری نے ٹریکٹر چلا کر انہیں مار دیا،متاثرین نے کہا کہ مذکورہ افراد کی ملی بھگت کی وجہ سے با اثر افراد کے خلاف کوئی کاروائی نہیں ہو سکی جبکہ صرف چند غریب افراد کو نشانہ بنایا گیا، ہم مذکورہ کرپٹ ترین افسران کے خلاف ہر پلیٹ فارم پر جائیں گے اور انصاف کے حصول تک اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے، گورنمنٹ گرلز پرائمری سکول کی عمارت پر بھی با اثر افراد نے گزشتہ 20سال سے قبضہ کررکھا ہے جس متعدد بار میڈیا کی طرف سے اخبارات میں اعلی حکام سے واگزار کروانے کا مطالبہ کیا جاتا رہا ہے لیکن کرپشن کے بادشاہوں کی مبینہ ملی بھگت کی وجہ سے با اثر قابضین کے خلاف آج تک کوئی کاروائی عمل میں نہیں لائی جا سکی، اہلیان علاقہ و متاثرین نے با اثر افراد سے ملی بھگت کرنے والے افسران کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے با اثر افراد سے زمین واگزار کروانے اور متاثرین کا نقصان پورا کرنے کا مطالبہ کیا ہے،

یہ بھی پڑھیں  پتوکی:جرائم اور منشیات کا خاتمہ اولین ترجیحات میں شامل ہے، ایس ایچ او
error: Content is Protected!!