شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / چونیاں:حضرت عمر فاروق کی زندگی ہمارے لئے ایک رول ماڈل کی حیثیت رکھتی ہے،افضل شاہین

چونیاں:حضرت عمر فاروق کی زندگی ہمارے لئے ایک رول ماڈل کی حیثیت رکھتی ہے،افضل شاہین

چونیاں (نامہ نگار)حضرت عمرفاروق رضی اللہ تعالیٰ عنہ کا عہدخلافت عدل و انصاف، بنیادی انسانی حقوق،اسلامی فتوحات، عظیم دینی و مذہبی خدمات کی بہترین مثال ہے۔ملک میں امن و امان لانے کیلئے حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالیٰ عنہ کے دور کا نظام عدل نافذ کرنا ہوگا۔حضرت عمر فاروق رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی زندگی ہمارے لئے ایک رول ماڈل کی حیثیت رکھتی ہے۔آج ہم نے اپنے ہیرو غیر ملکی اداکاروں اورکھلاڑیوں کو بنا رکھا ہے۔ موجودہ حالات میں ہمارے زوال کی ایک بڑی وجہ اپنے اسلاف کو چھوڑ کر غیروں کی تقلید ہے۔آپ کادوراسلامی تاریخ کا مثالی دور ہے۔ ہمارے حکمرانوں کو اس عہدسے اپنے کردارکا جائزہ لیناچاہئے۔ ہمارے تمام مسائل کا حل نبی پاک ﷺ اور خلفائے راشدین کی پیروی کرنے میں ہے۔اسلاف کے کارناموں کو نظر انداز کر کے ہم ذلیل و رسوا ہو رہے ہیں۔ آپ نے امور خلافت چلانے کیلئے مہاجرین و انصار کی مجلس شوریٰ قائم کی۔ باقاعدہ احتساب کا نظام قائم کیا۔ زراعت کی ترقی کیلئے نہری نظام بنایا۔ سن ہجری کی بنیاد رکھی۔مساجد کے آئمہ کرام، فوجیوں اور انکے اہل خانہ و اساتذہ کی تنخواہیں مقرر فرمائیں۔ مردم شماری، زمین کی پیمائش کا نظام، جیل خانے، صوبوں کا قیام،نماز تراویح کا باقاعدہ آغاز بھی آپ کے دور خلافت کی یادگاریں ہیں۔ ان خیالات کا اظہار ماہر تعلیم محمد افضل شاہین نے بسلسلہ شہادت فاروق اعظم رضی اللہ تعالیٰ عنہ طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ آپ نے اپنے دور حکومت میں عدل و انصاف کا ایک ایسا معیار قائم کیا کہ ایک غیر مسلم سکالر بھی یہ کہنے پر مجبور ہو گیاکہ اگر عمر فاروق رضی اللہ تعالیٰ عنہ کچھ سال اور زندہ رہ جاتے تو آج یورپ میں بھی اسلام کا پر چم لہرا رہا ہوتا۔آپ کی مدت خلافت تقریبا ساڑھے تیرہ سال بنتی ہے اور آپ کی حکومت 22 لاکھ مربع میل پر تھی۔ آپ ؓکو جو زندگی ملی وہ بڑی عظمتوں والی تھی اور جو موت ملی وہ بھی بڑی عظمت یعنی شہادت کی موت نصیب ہوئی اور آپؓ کو حضور ﷺ کے قدموں میں دفن ہونے کی سعادت ملی۔ یہ وہ جگہ ہے جہاں روزانہ صبح و شام ستر ہزار فرشتے اتر کر درود و سلام پیش کرتے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں  پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھنے کا اعلان

What is your opinion on this news?