شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / تازہ ترین / بھائی پھیرو:مظلوم خاندان کو دھکے دیکر تھانہ سے باہر نکالنے پرپولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ،ٹریفک بلاک

بھائی پھیرو:مظلوم خاندان کو دھکے دیکر تھانہ سے باہر نکالنے پرپولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ،ٹریفک بلاک

بھائی پھیرو(نامہ نگار) بھائی پھیرو۔تھانہ سٹی کے مظلوم خاندان کو دھکے دیکر تھانہ سے باہر نکال دیا۔ مظلوم خواتین،بچوں اور مردوں نے سٹی پولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اور ٹریفک بلاک کر دی۔سٹی پولیس کے خلاف خواتین کی سینہ کوبی اور نعرہ بازی۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز بھائی پھیرو شہر کی نواحی بستی لنگڑے والی ڈھاری میں دو فریقوں میں سیوریج کے گندے پانی کے مسئلے پر جھگڑا ہو ا۔غلام رسول پارٹی کے بچوں،خواتین اور مردوں پر حملہ کرکے بشارت پارٹی نے حملہ کرکے وحشیانہ تشددکیا اور زدو کوب کرکے شدید ذخمی کر دیا۔جب مظلوم غلام رسول پارٹی فریاد لیکر تھانہ سٹی بھائی پھیرو آئی تو بقول انکے تھانہ والوں نے انہیں دھکے مار کر تھانہ سے باہر نکال دیا۔اس پر مظلوم پارٹی کے درجوں مرد،خواتین اور بچے ہسپتال کے باہر جمع ہو گئے جس سے سڑک پر ٹریفک بلاک ہو گئی اور ٹریفک کی لمبی قظاریں لگ گئیں۔مظاہرین میں شامل خواتین نے سینہ کوبی کر کے سٹی پولیس کی جانبداری کے خلاف نعرے بازی کی۔مظاہرین کا کہنا تھا پولیس نے انہیں دھکے دیکر تھانہ سے باہر نکال دیا اور جب وہ مقامی ہسپتال ڈاکٹری نتیجہ لینے آئے تو انہیں نتیجہ نہیں دیا گیا۔مظاہریں نے آئی جی پنجاب سے اپیل کی ہے کہ وہ انہیں انصاف دلائیں کیونکہ وہ غریب ہیں اور مخالف پارٹی با اثر ہے۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ سٹی پولیس نے جرائم کنٹرول کرنے کا انوکھا طریقہ اپنا رکھا ہے۔جو بھی فریاد لیکر تھانہ آئے اسے ڈرا دھمکا کر بغیر ایف آر درج کرکے بھگا دیا جاتا ہے۔اس سے قبل بھی دو سائلین یاسر اور اشرف نامی سائلوں کو تھانہ سٹی کے ملازمین نے ڈرا دھمکا کر چپ کرا دیا۔عوامی سماجی حلقوں نے آئی جی پنجاب سے مطالبہ کیا کہ وہ تھانہ کے بد تمیز رویہ کو بند کرائیں اور انہیں انصاف دلائیں

یہ بھی پڑھیں  الطاف حسین الگ صوبے کا مطالبہ واپس لیں ورنہ ہڑتال کرینگے،ایاز پلیجو

What is your opinion on this news?