شہ سرخیاں
بنیادی صفحہ / پاکستان / خیبر پختونخوا حکومت کا یوٹرن،طالبات پر برقع پہننے کا نوٹیفکیشن واپس

خیبر پختونخوا حکومت کا یوٹرن،طالبات پر برقع پہننے کا نوٹیفکیشن واپس

پشاور(پاک نیوز) وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے سرکاری سکولوں میں طالبات پر برقع پہننے کو لازمی قرار دینے کا نوٹس واپس لے لیا۔وزیراعلیٰ سیکرٹریٹ کے مطابق وزیر اعلی نے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے محکمہ تعلیم کو ہدایت کی ہے کہ وہ طالبات کے لازمی برقع پہننے کا نوٹیفکیشن واپس لے۔ ذرائع کے مطابق ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر فی میل نے حکومتی اجازت لیے بغیر نوٹیفکیشن جاری کیا۔اس حوالے سے سیکرٹری تعلیم خیبر پختونخوا ارشد خان نے کہا کہ حکومت نے ایسی کوئی پالیسی نہیں بنائی جس کے تحت چادر یا برقع لینا لازمی ہو۔ ارشد خان نے مزید بتایا کہ کسی افسر کو اجازت نہیں دی جاسکتی کہ وہ حکومتی پالیسی کے بغیر اپنے طور پر فیصلہ کرے، صبح نوٹیفکیشن واپس لے لیں گے۔اس حوالے سے وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی نے کہا کہ سرکاری سکولز میں بچیوں کیلئے عبایا پہننے کو لازمی قرار نہیں دیا، ڈی ای او ہری پور نے والدین کی مرضی سے عبایا پہننے کا نوٹیفکیشن جاری کیا۔

یہ بھی پڑھیں  جے آئی ٹی نے شریف خاندان کے دستاویزاتی ثبوت حاصل کر لیے: ذرائع

What is your opinion on this news?