تازہ ترینعلاقائی

پھولنگر:پیپلز پارٹی کے سابق سینئر راہنما رانا شوکت محمود کی پہلی سالانہ برسی ہیڈ بلو کی میں منائی گئی

بھائی پھیرو(نامہ نگار)بھائی پھیرو۔پاکستان پیپلز پارٹی کے سابق سینئر راہنما سابق صوبائی وزیر اوررانا سفاری پاک ہیڈ بلوکی کے ڈائریکٹر رانا شوکت محمود کی پہلی سالانہ برسی بڑی عقیدت و احترام سے ہیڈ بلو کی کے قریب رانا ریزورٹ اینڈ سفاری پارک منائی گئی جس میں علاقہ بھر سے سیا سی و سماجی راہنماؤں کے ساتھ ساتھ کثیر تعداد میں عوام نے شرکت کی اس موقع پر ان کی بیگم پاکستان پیپلز پارٹی ضلع ننکا نہ کی راہنما بیگم ناصرہ شوکت نے کہا کہ رانا شوکت محمودایک بہترین شوہر کے ساتھ ساتھ ایک بہت اچھے والد، بہت اچھے نانااور بہت ہی اچھے سسر کے علاوہ غریب پرور بھی تھے انہوں نے کہا کہ انہوں نے سیاست میں آکر ہمیشہ غریب عوام کی ہی خدمت کی ہے جب وہ وزیر مال تھے تو غریب عوام کو مالکان حقوق دئے 5مرلہ سکیم کے تحت ہزاروں ٖغریب عوام کو ان کے گھر ان کے نام کئے انسانیت کے تحت سب کے ساتھ نرم گو شہ اختیار رکھتے انہوں نے اپنی لگن کے ساتھ را نا سفاری پارک کی بنیاد رکھی اور اسکی خوب آبیا ری کی جو آج پاکستان کے چند بڑے بڑے سفاری پارک میں اپنا مقام رکھتا ہے پاکستان میں دوردراز سے ہی نہیں بلکہ غیر ملک سے بھی لو گ سیرو سیاحت کے لئے سفاری پارک میں سیر کر نے کے لئے آتے اس موقع پر ڈاکٹر فرید ظفر پروفیسر آف لا ہور جنرل ہسپتال نے کہا کہ آج ایک سال ہو گیا ہے رانا شوکت محمود کو ہم سے بچھڑے ہو ئے مگر آج بھی اسی طرح ہمارے دلوں میں اسی طرح مو جود ہیں اگر آج ہم سب اکھٹے ہو ئے ہیں وہ بھی رانا شوکت محمود مرحوم کی وجہ سے وہ ایک درمند اور غریب درد رکھنے والے تھے انہوں کہا کہ جب ذوالفقار علی بھٹو کو گرفتار کیا گیا تو وہ اس وقت بہاولپور جلسہ کی تیاریاں کر رہے تھے اور ان کو بھی گرفتار کر کے شاہی قلعے میں پابند سلاسل کر دیا گیا اور وعدہ معاف گواہ کے لئے زور دیا گیا علا وازیں بڑی بڑی آفرپیش کی گئی مگر پارٹی کے لیئے ڈٹے رہے اورپانچ سال تک کا ل کوٹھری میں ہی گزارے وہ لا ہور ہا ئی کو رٹ کے جج بھی رہے اپو زیشن لیڈر بھی رہے پندرہ وزارتوں کے وزیر بھی رہے مگر ایک روپے کی بھی کرپشن یا ہیرا پھیری نہیں کی آج جو عوام پارک میں بیٹھی ہے کا روبار یا روز گاری چلا رہی ہے ان سے ایک روپیہ بھی وصول نہیں کیا جاتا یہی ان کی سب سے بڑی خوبی تھی۔ڈاکٹر پروفیسر عائشہ شوکت کا کہنا تھا کہ جو لوگ اچھے کام کر گئے وہ ہمیشہ زندہ رہتے ہیں ان کا کہنا تھا کہ میرے والد سے لو گ کہتے تھے کہ آپ وزیر ہو کر بھی نہ تو شوگر ملیں لگائیں نہ کوئی انڈسٹریز چلائیں مگر ان کو جواب ہو تا کہ میں صرف عوام کی خدمت ہی کرنے آیا تھا اور خدمت ہی کرتا رہو ں گا آج میں جہا ں جہاں جا تی ہو ں تو جب پتہ چلتا ہے کہ یہ رانا شوکت محمود مرحوم کی صاحبزادی ہے تو لو گ قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں اس موقع پر انہوں نے رانا شوکت محمود گیلری کا افتتاح بھی کیا تقریب کے آخر میں معروف مذہبی سکالر علا مہ مولانا خضر السلام نے دعائیہ کلمات ادا کئے اور ان کی مغفرت کے لئے دعا بھی کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں  ’’کربلا سے آتی ہے صدا‘‘

یہ بھی پڑھیے :

What is your opinion on this news?

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker