تازہ ترینعلاقائی

بھائی پھیرو: بھائی پھیرو تاریخ کا سب سے بڑا فراڈ۔

بھائی پھیرو(نامہ نگار)بھائی پھیرو۔تھانہ صدر بھائی پھیرو میں تاریخ کا سب سے بڑا فراڈ۔نجی بنک کے عملہ نے ساڑھے سات کروڑ روپے خرد برد کر لئے۔بینک کا ایک افسر پر اسرار طور پر غائب۔فراڈ میں مل انتظامیہ اور بینک عملہ کے ملوث ہونے کے بارے سوال اُٹھ گئے؟ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز ایک نجی بینک (حبیب بنک) کا عملہ برانچ آپریشن مینیجر محمد ارشاد بینک افسرفیاض احمد اورکیشیر محمد احمد نے ملی بھگت کر کے بینک قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بینک سے سات کروڑپچپن لاکھ روپے نکلوائے اور کیش لے جانے والی گاڑی میں کیش لے کر نواحی ٹیکسٹائل مل(نشاط)میں لے کر گئے۔وہاں سے بینک عملہ نے ویگن کے عملہ سے ملی بھگت کر کے ساری رقم غائب کر دی اوربینک آفیسر فیاض رقم لے کر رفو چکر ہو گیا۔ بڑے فراڈ کی خبر سن کر اعلیٰ ضلعی پولیس افسران فوراموقع پر پہنچ گئے۔اور تحقیقات شروع کر دیں۔ معلوم ہوا ہے کہ یہ رقم مل کے مزدوروں کی تنخواہ کے لئے مذکورہ مل کی اے ٹی ایم مشین میں ڈالنے کے لئے لائی گئی مگر وہاں سے غائب ہو گئی یہ امر قابل ذکر ہے کہ گذشتہ روز اس مل کے مزدوروں نے کئی کئی ماہ کی تنخواہیں نہ ملنے پر مل گیٹ پر احتجاج کیا تھا۔اور تھانہ صدر بھائی پھیرو پولیس نے طاقت کا استعمال کرتے ہوئے بے چارے مزرووں کو احتجاج سے روک دیا تھا۔۔ شعبہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ اس فراڈ میں بینک عملہ کے ساتھ ساتھ مل انتظامیہ بھی ملوث ہو سکتی ہے۔ کیونکہ مل انتظامیہ مزدوروں کو تنخواہ نہیں دینا چاہتی تھی۔تھانہ صدر بھائی پھیرو میں بینک کے ایرا آپریشن مینیجر محمد عثمان ستار نے اپنے ہی بنک کے آپریشن مینجر افسران محمد ارشاد، محمد احمد، فیاض احمد،اور کیش وین کے عملہ کے خلاف مقدمہ درج کرا دیا۔

یہ بھی پڑھیے :

What is your opinion on this news?

Back to top button
Close

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker